محکمہ تعلیم کے اہلکار کے بیٹے کو ملازمت دینے کے احکامات

  محکمہ تعلیم کے اہلکار کے بیٹے کو ملازمت دینے کے احکامات

  



پشاور(نیوزرپورٹر)پشاورہائی کورٹ کے چیف جسٹس وقاراحمدسیٹھ نے محکمہ تعلیم کے اہلکار کے بیٹے کو ملازمت دینے کے احکامات جاری کردئیے ہیں عدالت عالیہ کے فاضل چیف جسٹس نے یہ احکامات گذشتہ روز سیدقمرکی جانب سے دائررٹ کی سماعت کے دوران جاری کئے اس موقع پروکلاء کی ہڑتال کے باعث سیدقمرخودعدالت میں پیش ہوا اوربتایا کہ اس کاوالدمحکمہ تعلیم میں ملازم تھا جوفوت ہوچکاہے اوردرخواست گذار نے والدکی وفات کے بعدمحکمہ تعلیم میں فوت شدہ ملازمین کے بچوں کے کوٹہ کے تحت ملازمت کے لئے درخواست دی تاہم والد2013ء میں وفات پاچکاہے اوردرخواست گذار کو تاحال ملازمت نہیں دی گئی اس موقع پرچیف جسٹس کے استفسارپردرخواست گذار نے بتایا کہ وہ آٹھویں پاس اورغریب خاندان کاسربراہ ہے فاضل بنچ نے اس موقع پررٹ نمٹاتے ہوئے محکمہ تعلیم کوہدایات جاری کیں کہ درخواست گذارکی تعلیم کے مطابق جوجگہ خالی ہوتعینات کیاجائے جبکہ درخواست گذارکوبھی حکم دیا کہ اگرمحکمے والے نے کسی دوسرے کوبھرتی کیاتوتوہین عدالت کی درخواست دائرکردی جائے۔

مزید : پشاورصفحہ آخر