بھارتی سرکاری کا خوفناک منصوبہ بے نقاب، ایک کروڑ مسلمانون کو ملک بدرکرنے کا فیصلہ

  بھارتی سرکاری کا خوفناک منصوبہ بے نقاب، ایک کروڑ مسلمانون کو ملک بدرکرنے ...

  



کولکتہ(آئی این پی) انتہا پسند جماعت بھارتی جنتا پارٹی (بی جے پی)مغربی بنگال کے سربراہ دلیپ گھوش نے کہا ہے کہ ان کی حکومت پورے بھارت میں رجسٹریشن پالیسی پر عمل درآمد کرے گی جس کے بعد ایک کروڑ مسلمانوں کو ملک سے نکال دیا جائے گا۔ بین الاقوامی میڈیا کے مطابق انتہا پسند جماعت بھارتی جنتا پارٹی (بی جے پی)مغربی بنگال کے سربراہ دلیپ گھوش نے کہا ہے کہ ان کی حکومت پورے بھارت میں رجسٹریشن پالیسی پر عمل درآمد کرے گی جس کے بعد ایک کروڑ مسلمانوں کو ملک سے نکال دیا جائے گا۔اتوار کے روز ایک ریلی سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے الزام عائد کیا یہ مسلمان بھارت میں غیر قانونی طور پر رہ رہے ہیں۔دلیپ گھوش نے الزام عائد کیا کہ جو بھارتی کے متنازع شہریت کے بل کی مخالفت کررہے ہیں وہ بھارت کے خلاف ہیں۔انہوں نے کہا کہ غیر قانونی طور پر مقیم افراد حکومت کی جانب سے دو روپے کلو چاول کی سکیم سے فائدہ اٹھا رہے ہیں لیکن ہم جلد انہیں واپس بھیجیں گے۔بی جے پی رہنما نے الزام عائد کیا کہ بنگلہ دیشی مسلمان مغربی بنگال میں جرائم میں بھی ملوث ہیں۔

مسلمان ملک بدر

مزید : صفحہ اول