عدالت نے میو ہسپتال کومیڈیکل سٹورو ں کو لوکل پرچیز کے ٹھیکے دینے سے تاحکم ثانی روک دیا

عدالت نے میو ہسپتال کومیڈیکل سٹورو ں کو لوکل پرچیز کے ٹھیکے دینے سے تاحکم ...

  



لاہور(نامہ نگار)سول جج درجہ اول عمر دراز ہرل نے میو ہسپتال کی طرف سے میڈیکل سٹورو ں کو دیئے جانے والے لوکل پرچیز کے ٹھیکہ کے خلاف دائر درخواست پرحکم امتناعی جاری کرتے ہوئے تاحکم ثانی اس پر عمل درآمد روک دیاہے،عدالت نے قراردیاہے کہ قواعد وضوابط مکمل کرنے کے بعد ٹھیکہ جاری رہ سکتاہے۔عدالت میں درخواست گزار قمرسبحانی نے میو ہسپتال کے قریب موجودمیڈکل سٹورز جن میں الفلاح میڈیکوز، سی ٹو فارمیسی،اورنج فارمیسی،میڈیسن ان وغیرہ کے خلاف دائر درخواست میں اپنے وکیل کی وساطت سے موقف اختیار کیاہے کہ مذکورہ بالا میڈیکل سٹور مالکان کا مبینہ طور پر عرصہ 10سال سے میو ہسپتال کی انتظامیہ کی ملی بھگت سے لوکل پرچیز کا ٹھیکہ لے رہے ہیں، درخواست گزار نے نشاندہی کی کہ بڈ سے قبل دو اخباروں میں اشتہار دینا لازمی ہوتاہے جس پرمیوہسپتال نے عمل درآمد نہیں کیا،درخواست گزار کو معلوم ہواہے کہ ان میڈیکل سٹورز کوغیر قانونی طور پر دوبارہ 2جنوری کولوکل پرچیز کا ٹھیکہ دے دیاگیاہے جو غیر قانونی ہے،درخواست گزار نے الزام عائد کیاہے کہ مذکورہ بالا میڈیکل سٹور مالکان کے میوہسپتال انتظامیہ کے رشتہ دار ہیں جس کی وجہ سے ہربار انہیں ہی نوازاجاتاہے،عدالت سے استدعا ہے کہ لوکل پرچیز کے ٹھیکہ کو منسوخ کیا جائے،عدالت نے دلائل سننے کے بعد لوکل پرچیز کے ٹھیکہ پرحکم امتناعی جاری کرتے ہوئے تاحکم ثانی اس پر عمل درآمد روکتے ہوئے آئندہ سماعت پر جواب طلب کرلیاہے۔

مزید : صفحہ آخر