ایل این جی ریفرنس،شاہد خاقان عباسی سمیت دیگر ملزموں پرفرد جرم عائد نہیں ہو سکی ،سماعت4 فروری تک توسیع

ایل این جی ریفرنس،شاہد خاقان عباسی سمیت دیگر ملزموں پرفرد جرم عائد نہیں ہو ...
ایل این جی ریفرنس،شاہد خاقان عباسی سمیت دیگر ملزموں پرفرد جرم عائد نہیں ہو سکی ،سماعت4 فروری تک توسیع

  



اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)ایل این جی کیس میں سابق وزیراعظم شاہدخاقان عباسی سمیت دیگر ملزموں پر فرد جرم عائد نہیں ہو سکی ،جج احتساب عدلت نے کہا کہ یک مفرورملزم کی وجہ سے فردجرم عائدنہیں کرسکتے،مفرورملزم کی رپورٹ آجائے پھرکارروائی آگے بڑھے گی،عدالت نے شاہد خاقان عباسی کے جوڈیشل ریمانڈ میں 4 فروری تک توسیع کردی۔

تفصیلات کے مطابق احتساب عدالت میں ایل این جی ریفرنس کی سماعت ہوئی،سابق وزیراعظم شاہدخاقان عباسی ودیگرملزمان عدالت میں پیش ہوئے، سابق وزیر خزانہ مفتاح اسماعیل حاضری سے استثنیٰ کے باعث پیش نہ ہوئے ،حتساب عدالت اسلام آباد میں شاہد خاقان عباسی سمیت تمام ملزمان کی حاضری لگا دی گئی،عدالت نے چیئرپرسن اوگراعظمیٰ عادل،سابق چیئرمین سعید احمد خان کوحاضری یقینی بنانے کیلئے ایک کروڑ کے مچلکے جمع کرانے کا حکم دیدیا۔

جج احتساب عدالت نے کہا کہ ایک مفرورملزم کی وجہ سے فردجرم عائدنہیں کرسکتے،مفرورملزم کی رپورٹ آجائے پھرکارروائی آگے بڑھے گی،عدالت نے شاہدخاقان عباسی کے جوڈیشل ریمانڈمیں 4 فروری تک توسیع کردی اورنیب سے مفرورملزم شاہداسلام کے وارنٹ گرفتاری کی رپورٹ طلب کرلی،عدالت نے ایل این جی ریفرنس کی سماعت 4 فروری تک ملتوی کردی۔

مزید : اہم خبریں /قومی /علاقائی /اسلام آباد