خانیوال میں ایس ایچ او نے گھر میں گھس کر لڑکی کو ماں کے سامنے برہنہ حالت میں ڈانس کرنے پر مجبور کردیا

خانیوال میں ایس ایچ او نے گھر میں گھس کر لڑکی کو ماں کے سامنے برہنہ حالت میں ...
خانیوال میں ایس ایچ او نے گھر میں گھس کر لڑکی کو ماں کے سامنے برہنہ حالت میں ڈانس کرنے پر مجبور کردیا

  



خانیوال (ڈیلی پاکستان آن لائن ) مخدوم پور میں تھانیدار دوستی سے انکار پر لڑکی کے گھر دھاوا بول دیا ۔متاثرہ لڑکی صائمہ اور اس کی ماں نے الزام لگا یا کہ تھانیدار نفری کے ساتھ گھر آیااور زبردستی گھر میں گھس کر لڑکی کو برہنہ کیا اور ڈانس کرنے پر مجبور کیا ۔ایس ایچ او ظفر اقبال یتیم لڑکی صائمہ کو تعلقات استوار کرنے کے لیے دو ماہ سے تنگ کر رہا تھا ۔ظفر اقبال نے لڑکی کو ڈرایا دھمکایالیکن اس کے باوجود لڑکی نے تعلقات قائم کرنے سے انکار کیا تو ایس ایچ او سیخ پا ہوا اور اپنے ساتھ نفری لے کر صائمہ کے گھر پہنچ گیا ۔گھر میں ایس ایچ او نے لڑکی کو اس کی ماں کے سامنے برہنہ کیا اور ڈانس کرنے پر مجبور کیا ،اس دوران اس نے لڑکی پر کاغذکی پرچیاں پھینک کر کہا “یہ میں نے تیرا مجرا دیکھ لیا” ڈانس سے انکار پر تشدد کا نشانہ بھی بنایا۔متاثرہ لڑکی صائمہ نے دہائی دیتے ہوئے کہا کہ ایس ایچ او گھر سے جاتے ہوئے 20ہزار نقدی ،5موبائل اور سونے کی بالیاں بھی لے کر گیا۔ایس ایچ او نے دھمکی دی تھی کہ اگر اس کے خلاف کوئی ایکشن لیا تو وہ حشر کروں گا کہ ساری زندگی یاد رکھو گی۔ڈی پی او خانیوال نے واقعے کا نوٹس لےلیا

مزید : علاقائی /پنجاب /خانیوال