لشکر طیبہ بنگلہ دیش اور میانمار سرحد پر سرگرم ہے :بھارت

لشکر طیبہ بنگلہ دیش اور میانمار سرحد پر سرگرم ہے :بھارت
لشکر طیبہ بنگلہ دیش اور میانمار سرحد پر سرگرم ہے :بھارت

  

نئی دہلی(مانیٹرنگ دیسک)بھارت نے عک بار بھر پاکستان پر دہشت گردی کا الزام لگایا ہے اور کہا ہے کہ پاکستان کی تنظیم لشکر طیبہ اور جماعت الدعوہ ہندعستان میں بنگلہ دیش اور میانمر کے بارڈر پر منظم کارﺅائیاں کر رہی ہے ۔ بھارتی اخبار نے خفیہ ایجنسی را اور دوسری ایجنسیوں کے حوالے کہا ہے کہ ایک طرف لشکر طیبہ میانمار اور بنگلہ دیش کے سرحدی علاقوں میں مسلمان کو اکٹھے کر کت شر انگیزی کر رہی ہے جبکہ دوسری جانب جماعت الدعوہ کے سربراہ حافظ سعید احمد پاکستان میں برما کے خلاف مسلمانوں کی نسل کشی کے نام پر متحرک ہیں۔ اخبار کے مطابق برما کے خالاف ایک منظم تحریک چلائی جا رہی ہے جس کا اغاز 2012ءمیں منعقد ہونے والی ایک کانفرنس سے کیا گیا جس میں لشکر طیبہ جماعت الدعوہ نے دو افراد ندیم اعوان اور شاہد محمود رحمت اللہ کو بنگلہ دیس اور میانمر میں ہم خیال مسلمانوں سے راوبط بڑھنے کی ذمہ داری سونپی۔ علاوہ ازیں جیشِ محمد اور جماعت المجاہدیں سمیت دوسری جماعتیں بھی کاروئیوں میں مصروف ہیں ۔

مزید : بین الاقوامی