زلزلہ زدگان کے پیسے کھانا مردار کھانے کے برابر ،شہباز شریف ،رمضان شوگر ملز کیس میں عدالت پیش

زلزلہ زدگان کے پیسے کھانا مردار کھانے کے برابر ،شہباز شریف ،رمضان شوگر ملز ...

  

لاہور(نامہ نگار)احتساب عدالت کے جج وسیم اختر نے رمضان شوگرملزکیس میں اپوزیشن لیڈرشہبازشریف اور صاحبزادے اپوزیشن لیڈر پنجاب اسمبلی حمزہ شہباز کے کیس کی سماعت یکم اگست تک ملتوی کردی،احتساب عدالت میں رمضان شوگرمل کیس کی سماعت شروع ہوئی توشہباز شریف عدالت میں پیش ہوئے جبکہ حمزہ شہبازکو نیب کی جانب سے عدالت میں پیش نہیں کیاگیا،عدالت کو پراسیکیوٹر نے بتایا کہ حمزہ شہبازغیر قانونی اثاثے کیس میں ریمانڈ پرہیں ،رمضان شوگرملز کیس میں عدالت حمزہ شہباز کوجوڈیشل کرچکی ہے،وکیل صفائی نے اعتراض کیا کہ حمزہ شہبازکو بھی پیش کرناچاہئے تھا،عدالتی استفسارپرپراسیکیوٹر وارث جنجوعہ نے عدالت کو آگاہ کیا کہ حمزہ شہبازکو24جولائی کو عدالت میں پیش کیاجائے گا ۔ شہباز شریف نے عدالت سے کہا کہ نیب کی ذمہ داری تھی کہ وہ حمزہ شہباز کو پیش کرتے ۔ شہباز شریف نے عدالت میں کہا کہ ان پرجھوٹے الزامات لگا کرمقدمات درج کئے جارہے ہیں ،شہباز شریف نے مزید کہا کہ ان کے خلاف جوخبرلگوائی گی اس میں انہیں بدنام کرنے کی کوشش کی گئی ہے جس پرعدالت نے ریمارکس دئیے کہ آپ جو کچھ کہہ رہے ہیں اس کا اس کیس سے تعلق نہیں ہے ۔ عدالت نے وکلاء کے دلائل سننے کے بعد رمضان شوگر ملز کیس کی سماعت یکم اگست تک ملتوی کرتے ہوئے آئندہ سماعت پر حمزہ شہباز کو بھی عدالت میں پیش کرنے کا حکم دیاہے ،میاں شہباز شریف کی پیشی کے موقع پرسیکیورٹی کے سخت انتظامات کئے گئے ،سٹرکوں پر بیریئرز لگا کر سٹرکوں کو بند کردیا گیا تھا جس سے سائلین کو شدید مشکلات کا سامنا رہا ۔ عدالتی سماعت کے بعد میاں شہبازشریف نے میڈیاسے گفتگو کرتے ہوے کہا کہ زلزلہ زدگان کا پیسہ کھانا مردے کا گوشت کھانے کے مترادف ہے،میاں شہباز شریف کے وکیل عطاء تارڑ نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ شہباز شریف نے بیرون ملک شاءع ہونے والی خبرمسترد کر دی ہے،مسلم لیگ (ن) کے ساتھ امتیازی سلوک کیاجارہا ہے ۔

شہباز شریف

مزید :

صفحہ اول -