پی ٹی آئی کو فعال کرنیکا فیصلہ‘ جنوبی پنجاب کی پگ نورخان بھابھہ کے حوالے

  پی ٹی آئی کو فعال کرنیکا فیصلہ‘ جنوبی پنجاب کی پگ نورخان بھابھہ کے حوالے

  

میلسی(سپیشل رپورٹر)جنوبی پنجاب میں تحریک انصاف کی روز بروز کمزور ہوتی ہوئی سیاسی پوزیشن کی بناء پر اعلیٰ قیادت نے جنوبی پنجاب کے صدر نواب اسحاق خان خاکوانی کو عہدے سے ہٹا کر نور خان بھابھہ کو پارٹی کا نیا صدر نامزد کیا نور خان بھابھہ تحصیل میلسی کے علاقہ موضع ملکو سے تعلق رکھتے ہیں (بقیہ نمبر45صفحہ7پر)

اور بھابھہ خاندان نے پیپلز پارٹی کے پلیٹ فارم سے تحصیل میلسی سے قومی اسمبلی کیلئے 4 الیکشن لڑے جس میں 2 بار کامیابی حاصل کی پہلی مرتبہ 1988 میں نور خان بھابھہ کے بڑے بھائی محمد ممتاز خان بھابھہ ایم این اے بنے بعد ازاں 1993کے الیکشن میں نور خان بھابھہ ممبر قومی اسمبلی منتخب ہوئے اور پارلیمانی سیکرٹری زراعت و خوراک مقرر ہوئے 2012 میں موجودہ صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے ان کی اقامت گاہ موضع ملکو میں خود آ کر تحریک انصاف میں شمولیت کی دعوت دی اور جنوبی پنجاب سے پہلی بار ایک سابق ایم این اے نور خان بھابھہ کی صورت میں تحریک انصاف میں شامل ہوئے اور 2018 کے الیکشن سے قبل تک نور خان بھابھہ نے بحیثیت پارٹی صدر جنوبی پنجاب بھر میں پارٹی کو متحرک اور فعال بنایا اور کارکنوں کی بھاری کھیپ پیدا کی ملتان، بہاولپور اور رحیم یار خان میں پارٹی قائد عمران خان کے عظیم الشان جلسے منعقد کیئے تا ہم الیکشن سے قبل تنظیمیں توڑ کر عہدیدار نامزد کیئے گئے تو نواب اسحاق خان خاکوانی کو ان کی جگہ پارٹی کا صدر نامزد کیا گیا جو نہ صرف خود قومی اور صوبائی اسمبلی کی نشستوں سے الیکشن ہارے بلکہ اپنی ناقص پالیسیوں کی وجہ سے ضلع وہاڑی میں قومی اسمبلی کی 2 او رصوبائی اسمبلی کی 4 نشستیں بھی گنوا دیں اور روایتی طرز سیاست اختیار کرتے ہوئے تحریک انصاف کو ڈرائنگ روم او ڈیروں تک محدود کر دیا اس صورتحال پر پارٹی کارکنوں کی مسلسل شکایات کے بعد اعلیٰ قیادت نے جنوبی پنجاب کی تنظیم میں موجودہ تبدیلیاں کر کے پارٹی کو دوبارہ عوامی سطح پر منظم کرنے کی کوشش کی ہے۔ادھر نور محمد خان بھابھہ نے کہا ہے کہ وزیر اعظم پاکستان عمران جان اور پارٹی کی دیگر اعلی قیادت نے پارٹی کی جنوبی پنجاب میں دوبارہ صدارت سونپ کر جس اعتماد کا اظہار کیا ہے اس پر پارٹی کا شکر گزار ہوں اور انشاء اللہ اپنی انتہائی صلاحیتوں کو بروئے کار لا کر جنوبی پنجاب میں پارٹی کو دوبارہ کارکن اور ورکر کی جماعت بنائیں گے ان خیالات کا اظہار انہوں نے جنوبی پنجاب پی ٹی آئی کے صدر کی ذمہ داریاں ملنے پر صحافیوں سے گفتگو کے دوران کیا انہوں نے کہا کہ اپنے پہلے دور صدارت کے دوران کارکنوں کی بھر پور محنت اور دن رات کاوشوں سے پارٹی کو جنوبی پنجاب کی سب سے بڑی سیاسی جماعت بنایا جس کا نتیجہ 2018ء کے الیکشن میں سامنے آیا اور تحریک انصاف جنوبی پنجاب کی سب سے بڑی سیاسی جماعت بن کر ابھری اب بھی پارٹی کو از سر نو منظم کریں گے انہوں نے کہا کہ جنوبی پنجاب صوبہ کا قیام پارٹی کا خطے کی عوام سے وعدہ ہے اس وعدے کو پورا کرانے میں بھر پور کردار ادا کریں گے اس موقع پر سابق چیئرمین یوسی سنڈھل محمد، چوہدری محمود اقبال گجر بھی ہمراہ تھے۔

نور بھابھہ

مزید :

ملتان صفحہ آخر -