کورونا وائرس کی عالمگیر وبا پاکستان میں روز مرہ کی زندگی کو متاثر کر رہی ہے: عالمی بینک

کورونا وائرس کی عالمگیر وبا پاکستان میں روز مرہ کی زندگی کو متاثر کر رہی ہے: ...

  

اسلام آباد (سٹاف رپورٹر)پاکستان میں عالمی بینک کے کنٹری ڈائریکٹرالانگوپیچوموتونے کہاہے کہ کورونا وائرس کی عالمگیروبا پاکستان میں روزمرہ کی زندگی کومتاثرکررہی ہے،انتظامی بورڈ نے سیکیورینگ ہیومین انویسٹمنٹس ٹوفوسٹرٹرانسفرمیشن (شفٹ) پروگرام کیلئے 500 ملین ڈالر کے پروگرام کی منظوری دی، پروگرام کے ذریعہ پاکستان میں افرادی قوت کی معاونت اورسماجی تحفظ کے پروگراموں کومضبوط بنانے کیلئے تین پالیسی اصلاحات میں معاونت فراہم کی جائیگی۔ اپنے بیان میں انہوں نے کہاکہ کورونا وائرس کی عالمگیروبا پاکستان میں روزمرہ کی زندگی کومتاثرکررہی ہے، اس سے نہ صرف اقتصادی رکاوٹیں پیش آرہی ہیں بلکہ عوامی خدمات اورانسانی سرمایہ پراضافی دباؤ بھی بڑھ رہاہے، 21 مئی کو عالمی بینک کے انتظامی بورڈ نے سیکیورینگ ہیومین انویسٹمنٹس ٹوفوسٹرٹرانسفرمیشن (شفٹ) پروگرام کیلئے 500 ملین ڈالر کے پروگرام کی منظوری دی ہے،یہ پروگرام صحت عامہ کے عالمگیر نظام اورسماجی تحفظ کی خدمات کی اہمیت کو اجاگرکررہاہے۔عالمی بینک کے کنٹری ڈائریکٹرنے کہاکہ شفٹ پروگرام کے ذریعہ پاکستان میں افرادی قوت کی معاونت اورسماجی تحفظ کے پروگراموں کومضبوط بنانے کیلئے تین پالیسی اصلاحات میں معاونت فراہم کی جائیگی، پروگرام کے ذریعہ ضروری خدمات بالخصوص بنیادی صحت عامہ اورتعلیم تک یکساں رسائی، لیبرفورس میں شامل خواتین کیلئے سازگارماحول کی فراہمی اورسماجی تحفظ کے پروگراموں کوموثربنانے میں تعاون فراہم کیاجائیگا۔پروگرام کی ٹاسک ٹیم لیڈرکرسٹیناپاناسکوسانتوز نے کہا کہ پاکستان کی کورونا وائرس کی وباء کے سماجی اورمعاشی اثرات کوکم کرنے کی صلاحیت کاانحصار سماجی تحفظ کے پروگرام کو ضرورت مندلوگوں تک جلد ازجلد پہنچانے پرہے۔ انہوں نے کہاکہ عالمی بینک کے اس پروگرام سے احساس اورسماجی تحفظ کے صوبائی پروگراموں کوہم آہنگ کیاجائیگا تاکہ وباء کے دنوں میں ضرورت مندلوگوں کی بہترطریقے سے شناخت ہوسکے اورانہیں امداد کی فراہمی کو ممکن بنایاجاسکے۔

عالمی بینک

مزید :

صفحہ اول -