قوم اسمبلی،انسداد کورونا ادویات کی قیمتیں نہیں بڑھائی گئیں، حکومت

    قوم اسمبلی،انسداد کورونا ادویات کی قیمتیں نہیں بڑھائی گئیں، حکومت

  

اسلام آباد(سٹاف رپورٹر)حکومت نے قومی اسمبلی کو بتایا ہے کہ ادویات کی قیمتوں میں اضافے کیلئے کمپنیوں کی جانب سے لاتعداد درخواستیں موصول ہوئیں، تاہم کووڈ۔19سے متعلق کسی بھی دوائی میں اضافہ نہیں کیا جائیگا جبکہ اپوزیشن نے زندگی بچانے والی ادویات کی قیمتوں میں اضافے کو غریب دشمن قرار دیتے ہوئے مطالبہ کیا کہ قیمتوں میں اضافہ فی الفور واپس لیا جائے، دوسری جانب ملک میں ٹڈی دل اور سرکاری ملازمین کی عمر اور پنشن کے خاتمے سے متعلق سوالات پر حکومت نے بتایا صوبوں اور وفاق نے مل کر ٹڈی دل کے تدارک کیلئے 2854.05ملین روپے مختص کیے ہیں جبکہ حکومت نے سرکاری ملازمین کی پنشن کے خاتمے اور عمر کم کرنے سے متعلق خبروں کی تردید کرتے ہوئے کہا ایسی خبریں چھا پنے سے عوام میں خوف وہراس پھیلتا ہے جس کا کوئی وجود ہی نہیں ہوتا، دوسری جانب مذہبی امور سے متعلق سوال کے جواب میں بتایا گیا کہ حجاج کرام سے امسال 50 ارب رو پے حاصل ہوئے تھے۔بینکوں میں رکھنے پر اس رقم پر 49کروڑ روپے منافع حاصل ہوا تھا۔قومی اسمبلی میں وقفہ سوالات کے دوران پارلیمانی سیکرٹری صحت نوشین حامد نے کہا کہ قومی ادارہ صحت کی مکمل از سر نو تنظیم کی جائے گی،ری ویمپنگ کے بعد کتے کے کاٹے کی ویکسین بنانے میں این آئی ایچ خود کفیل ہو جائے گا،سندھ کو اگر ویکسین کی ضرورت ہے تو پہلے کے واجبات ادا کرے،گزشتہ دو سپلائیز کی ادائیگی نہیں ہوئی،پمز اور پولی کلینک میں سو سے زائد وینٹی لیٹرز موجود ہیں،پمز میں 26وینٹی لیٹرز پر کرونا مریضوں میں سے اب 10 وینٹی لیٹرز پر رہ گئے ہیں۔ پمز اور پولی کلینک کیلئے کوئی نئے وینٹی لیٹر ہسپتالوں کے خرچ پر نہیں خریدے گئے،پمز اور پولی کلینک کے پاس پہلے سے مناسب تعداد میں وینٹی لیٹرز موجود تھے جو کمی تھی وہ این ڈی ایم اے نے پوری کردی اور کتے کے کاٹنے کی ویکسین چھ لاکھ وائلز تک بڑھانے کیلئے 470ملین روپے رکھے جارہے ہیں۔ انصاف صحت کارڈ سے تین لاکھ لوگ فائدہ اٹھا چکے ہیں،تین لاکھ لوگوں پر دس ارب روپے خرچ ہوچکے ہیں۔خواجہ آصف نے سوال کیا کہ کورونا کے درمیان دوائیوں کی قیمتیں بڑھانا مضحکہ خیز ہے، د و ا ئیوں کی قیمتوں پر پارلیمانی کمیٹی بنائی جائے،گزشتہ دو سالوں میں قیمتیں کتنا بڑھیں، پوچھا جائے،اس ایشو کو قائمہ کمیٹی میں بھیج دیں، رولنگ دے۔ جس پر سپیکر نے کہا میں دوائیوں کی قیمتوں کے مسئلہ کو قائمہ کمیٹی میں بھیجتا ہوں جس پر نوشین حامد نے جواب دیا کہ ادویات ساز کمپنیوں کی جانب سے قیمتوں میں اضافے کے ایک سو سے زائد درخواستیں آئی ہیں،کوویڈ 19کی وجہ سے کمپنیوں کو کہا گیا کہ ستمبر تک ادویات کی قیمتوں میں اضافہ نہ کریں،اگر کمپنیوں نے اضافہ کیا تو کارروائی کی جائے گی۔وفاقی ویر قومی غذاء تحفظ و تحقیق فخر مام نے تحریری جواب میں بتایا ملک میں 2019میں ٹڈی دل کا پہلا حملہ 17مارچ کو تربت بلوچستان میں ہوا،محکمہ پلانٹ پروٹیکشن نے وزارت کی ٹیموں نے اس حملے پر قابو پالیا تھا،اب تک 449145ہیکٹررقبے پر ٹڈی دل تلف کرنے کا کام آپریشن کیا جا چکا ہے،صوبائی محکمہ زراعت، ضلعی انتظامیہ کے تعاون سے ٹڈی دل تلف کرنے کا عمل جاری ہے۔پنجا ب کے علاوہ کسی صوبے نے ٹڈی دل حملے سے ہونیوالے نقصانات کے بارے میں آگاہ نہیں کیا،صوبوں اور وفاق نے مل کر ٹڈی دل کے تدارک کیلئے 2854.05ملین روپے مختص کیے ہیں،وفاق نے 955.55ملین، پنجاب نے 1000ملین سندھ نے 361ملین،کے پی کے 2.5ملین اور بلوچستان نے 635ملین روپے دیے ہیں،ٹڈی دل کے مکمل خاتمے کیلئے چین اور خوراک کی عالمی تنظیم ایف اے او بھی مدد کر رہی ہیں۔ وزیر مذہبی امور نور الحق قادری نے کہا حجاج ویلفیئر فنڈ کے ذریعے رقم مختلف سہولیات پر خرچ کی جا تی ہے۔حجاج کیلئے صرف ادویات پر ایک ارب روپے خرچ ہوتے ہیں۔ حجاج کرام کے پچاس ارب روپے شرعی اکاونٹس میں رکھے گئے تھے اس سے نفع و نقصان کی بنیاد پر 49 کروڑ روپے ملے،یہ رقم حجاج کرام کے علاج ویکسین وغیرہ پر خرچ کی جاتی ہے،مکہ مکرمہ کی طرح مدینہ منورہ میں بھی پاکستان ہاوس بنانے کی کوشش ہے،ہمارا مدینہ میں پاکستان ہاوس توسیع کے وقت گرایا گیا تھا اس کا کیس عدالت میں ہے،عدالت جونہی فیصلہ دے گی ہم سعودی حکومت سے زمین عطیہ لیکر اس رقم سے وہاں پاکستان ہاوس بنانے کی کوشش کریں گے۔مشیر پارلیمانی امور ڈاکٹر بابر اعوان نے سرکاری ملازمین کی عمر 55سال کرنے،پنشن ختم کرنے اور تنخواہوں میں سالانہ اضافہ نہ ہونے کی تمام خبروں کی تردید کی اور کہا کہ جس بات کا فسانہ میں ذکر تک تھا وہ میڈیا پر شہہ سرخیاں بنتی رہیں۔ ججز کی عمر بڑھانے کی فوری کوئی تجویز نہیں،اس کیلئے آئینی ترمیم کرنا ہوگی۔

قومی اسمبلی

مزید :

صفحہ اول -