وزیراعظم ہاوسنگ سکیم کے لیے چین نے بڑی پیشکش کردی

وزیراعظم ہاوسنگ سکیم کے لیے چین نے بڑی پیشکش کردی
وزیراعظم ہاوسنگ سکیم کے لیے چین نے بڑی پیشکش کردی

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن) چیئرمین سی پیک اتھارٹی لیفٹیننٹ جنرل (ر)عاصم سلیم باجوہ نے کہا ہے کہ کوروناکے باوجود کسی منصوبے پر کام نہیں رکا۔ ہمیں ہدایت کی گئی تھی کوئی منصوبہ رکنا نہیں چاہیے۔

سینیٹ کی خصوصی کمیٹی برائے سی پیک کے اجلاس میں بریفنگ دیتے ہوئے عاصم سلیم باجوہ نے کہا کہ سی پیک منصوبوں کی پیشرفت سے مکمل طور پرمطمئن ہیں، چین وزیراعظم ہاؤسنگ سکیم میں سستے گھروں کیلئے بھی 10 کروڑ ڈالر دینے کو تیار ہے۔

انہوں نے کہا مستقبل کے منصوبوں کی بہترین منصوبہ بندی کی ہے،سی پیک ترقی یافتہ پاکستان کی ضمانت ہے،اس سے ملک میں تعمیر و ترقی کا انقلاب برپا ہوگا۔

ایم ایل ون منصوبہ جلد پایہ تکمیل کو پہنچے گا، شاہراہوں کا جال بچھے گا، اورنج لائن ٹرین منصوبہ قطعا سیاسی نہیں، ٹرین جلد عوام کیلئے کھول دی جائے گی، سوشیو اکنامک منصوبوں میں سب سے زیادہ حصہ بلوچستان اور سب سے کم حصہ پنجاب کا ہے، سی پیک کے حوالے سے جو ہو سکتا ہے کریں گے، غلط وعدے نہیں کریں گے۔ 

دنیا نیوز کے مطابق کمیٹی کا اجلاس سینیٹر شیری رحمن کی صدارت میں ہوا۔ عاصم سلیم باجوہ نے کہا سی پیک ابتدائی طور پر بنیادی ڈھانچے اور توانائی پر مشتمل تھا، اب زراعت اور سیاحت کو بھی شامل کرلیا گیا ہے، توانائی کے تمام منصوبوں میں کلیدی پیشرفت ہوگئی ہے، 1120 میگاواٹ کے کوہالہ ہائیڈرو پاور پراجیکٹ میں 118 مسائل تھے جنہیں حل کیا اور اس کا معاہدہ ہوگیا ہے۔

انہوں نے بتایا کہ سی پیک میں 10 دن میں 4 ارب ڈالر کی بیرونی سرمایہ کاری لائی گئی ہے، گوادر میں 300 میگاواٹ کے پاور پراجیکٹس کے مسائل بھی حل کرلئے گئے ہیں جن کا جلد افتتاح ہوگا، تھر بلاک میں اپنے کوئلے سے بجلی بنانے جا رہے ہیں، ماشخیل، تربت، واشو، خاران اور کیچ میں بجلی کے مسائل حل کر رہے ہیں۔

مزید :

اہم خبریں -قومی -