”کوئی بھی کھلاڑی ٹیم کیلئے ناگزیر نہیں کیونکہ۔۔۔“ وقار یونس نے محمد عامر کو خبردار کر دیا

”کوئی بھی کھلاڑی ٹیم کیلئے ناگزیر نہیں کیونکہ۔۔۔“ وقار یونس نے محمد عامر کو ...
”کوئی بھی کھلاڑی ٹیم کیلئے ناگزیر نہیں کیونکہ۔۔۔“ وقار یونس نے محمد عامر کو خبردار کر دیا

  

ڈربی (ڈیلی پاکستان آن لائن) پاکستان کرکٹ ٹیم کے باﺅلنگ کوچ وقار یونس نے کہا ہے کہ کوئی بھی کھلاڑی ٹیم کیلئے ناگزیر نہیں ہے، محمد عامر کو دیکھنا ہوگا کہ وہ کہاں کھڑے ہیں تاکہ ان کے مستقبل کے حوالے پلان کیا جا سکے، محمد عامر کیلئے دروازے کبھی بند نہیں کئے، انہیں بلانے کا مقصد یہ نہیں کہ ضرور کھلائیں گے، جو اپنی فارم اور ردھم کی بنیاد پر ٹیم کی ضرورت ہو گا، وہی کھیلے گا۔

تفصیلات کے مطابق وڈیو لنک پر میڈیا کے سوالات کے جواب دیتے ہوئے وقار یونس نے کہا کہ جب محمد عامر نے اچانک ریڈ بال کرکٹ چھوڑنے کا فیصلہ کیا توہمیں اچھا اس لئے نہیں لگا کہ ٹیم کو ضرورت تھی، ہم نے ناراضی کا اظہار بھی کیا لیکن کسی کیلئے دروازے بند نہیں کئے، محمد عامر وائٹ بال کرکٹ کھیل رہے ہیں تجربہ کار ہیں، ہمارے پاس موقع بھی تھا اس لئے انہیں بلایا تاہم انہیں بلانے کا مقصد یہ نہیں ہے کہ انہیں بلایا تو کھلائیں گے، کوئی ناگزیر نہیں ہے جو اپنی فارم اور ردہم کی بنیاد پر ٹیم کی ضرورت ہو گا وہی کھیلے گا۔

سابق فاسٹ باﺅلر نے کہا کہ انگلینڈ میں سب فاسٹ باﺅلر عمدہ باﺅلنگ کر رہے ہیں جو میرے لئے اطمینان کی بات ہے، نسیم شاہ اور شاہین شاہین آفریدی باصلاحیت تو ہیں ہی، اب انہیں وکٹ لینے کا فن بھی آ رہا ہے، میرے اور وسیم اکرم کے ساتھ ان دونوں کو ابھی ملانا قبل ازوقت ہے، کوئی بھی رائے دینا جلد بازی ہوگی لیکن دونوں باﺅلرز کی صلاحیتیوں میں شک نہیں اور وہ تیزی سے سیکھ رہے ہیں۔

وقار یونس نے کہا کہ وہ سب فاسٹ باﺅلرز کو دیکھ کر اپنے، اپنے کیرئیر کا آغاز یاد کرتے ہیں، یہی نوجوان فاسٹ باﺅلر مجھے جوان رکھتے ہیں، اچھا ہے کہ بیک وقت اتنے باﺅلرز اچھی باﺅلنگ کر رہے ہیں اور سب کا دستیاب ہونا پرابلم تو ہے لیکن یہ گڈ پرابلم ہے۔

وقار یونس نے کہا کہ محمد حفیظ یا شعیب ملک کو ریٹائر ہونے کا مشورہ نہیں دے سکتا کیونکہ میں سلیکشن کمیٹی میں شامل نہیں ہوں، سہولت کار ہوں اپنے تجربے کی بنیاد پر مشورہ دے سکتا ہوں لیکن ریٹائر ہونے یا نہ ہونے کا ان کا ذاتی فیصلہ ہے، اگر وہ ریٹائر نہیں ہوتے تو پھر کھلانے یا نہ کھلانے کا فیصلہ سلیکٹرز نے کرنا ہے۔

باﺅلنگ کوچ نے کہا کہ ویرات کوہلی کے علاوہ بھی کئی ایتھلیٹس فٹنس میں ٹاپ لیول رکھتے ہیں، ویرات کا لیول بھی اچھا ہے لیکن پاکستان کے کھلاڑیوں نے اس کے معیار تک نہیں پہنچنا بلکہ ان کا اپنا معیار ہے، بابر اعظم سپر فٹ ہے، شاہین شاہ آفریدی بھی بہت بہتر ہو رہا ہے، دیگر کھلاڑی بھی فٹنس میں شاندار ہیں۔

وقار یونس نے کہا کہ پانچ اگست سے شروع ہونے والی ٹیسٹ سیریز سے قبل کھلاڑی 100 فیصد تیار ہوں گے سب اعتماد رکھیں سیریز میں انگلینڈ کو چیلنج کریں گے، مجھے پہلے لگا کہ باﺅلرز کو تھوک نہ لگانے کی وجہ سے مشکل ہو گی لیکن ایسا نہیں ہوا جس کی وجہ سے میں حیران ہوا ہوں کیونکہ گیند سوئنگ بھی ہو رہا ہے اور کوئی ایشو بھی نہیں ہے۔

مزید :

کھیل -