ڈیری ایسو سی ایشن آفپاکستان کا سیلز ٹیکس کے خلاف احتجاج مارچ

ڈیری ایسو سی ایشن آفپاکستان کا سیلز ٹیکس کے خلاف احتجاج مارچ

لاہور (پ ر) ڈیری ایسوسی ایشن آف پاکستان کے کارکنوں نے وفاقی حکومت کی طرف سے ڈیری اشیاء خوردونوش پر سیل ٹیکس عائد کرنے پر گڑھی شاہو چوک سے پریس کلب تک احتجاجی مارچ کیا اور پریس کلب کے سامنے اشیاء خوردونوش پر سیل ٹیکس کے خلاف شدید نعرہ بازی کی۔ مظاہرین سے خطاب کرتے ہوئے ڈیری ایسوسی ایشن کے عہدے داروں سید خاور عباس، عدنان سہیل، حافظ عزیز و دیگر نے کہا کہ دودھ، دہی، گھی اور مکھن پر سیل ٹیکس عائد کرنا نہ کہ صرف سراسر ظلم ہے

بلکہ عوام کے منہ سے نوالہ چھیننے کے مترادف ہے ۔ ہم مطالبہ کرتے ہیں کہ وفاقی حکومت کھانے اور پینے کی اشیاء پر سیل ٹیکس جیسا عوام دشمن فیصلہ واپس لے ورنہ ملک بھر میں احتجاج اورمظاہرے کریں گے۔ مقررین نے کہا کہ اگر حکومت عوام کور ریلیف نہیں دے سکتی تو کم از کم ان پرمزید ٹیکسوں کا بوجھ تو نہ ڈالے یہ کیسا عوام دوست بجٹ ہے کہ امیروں کو ٹیکس چھوٹ اور غریبوں پر کئی قسم کے بے شمار ٹیکس لگا دیے گئے ہیں۔ کھانے پینے کی اشیاء ٹیکس لگا کر غریب عوام کو بھوکا بے موت مارنے کا بجٹ عوام مسترد کرتے ہیں۔ اشیاء خوردونوش پر عائدٹیکس واپس لیا جائے ورنہ اسلام آباد کی طرف لانگ مارچ کریں گے۔

مزید : میٹروپولیٹن 4