انتخابی دھاندلیوں کی شکایات ،دودھ کا دودھ اور پانی کا پانی کر دینگے :چیف جسٹس

انتخابی دھاندلیوں کی شکایات ،دودھ کا دودھ اور پانی کا پانی کر دینگے :چیف جسٹس

 اسلام آباد (آن لائن) چیف جسٹس ناصر الملک کی سربراہی میں تین رکنی کمیشن نے الیکشن 2013ء میں مبینہ دھاندلی کے الزامات کے حوالے سے معاملے کی سماعت کی جبکہ ایم کیو ایم کے رہنما ڈاکٹر فاروق ستار اور قومی اسمبلی کے مزید تین حلقوں کے ریٹرننگ افسرون کے بیانات قلمبند کرلئے ہیں۔ ایم کیو ایم کی جانب سے ڈاکٹر فاروق ستار نے بیان قلمبند کراتے ہوئے جماعت اسلامی اور مہاجر قومی موومنٹ کی جانب سے ایم کیو ایم پر لگائے جانے والے دھاندلی کے الزامات مسترد کر دیے، کمیشن نے شواہد جمع کرانے اور گواہان پیش کرنے کا عمل مکمل کرلیا۔ کمیشن کے سربراہ چیف جسٹس ناصر الملک نے کہا ہے کہ ہم اپنے مینڈیٹ سے باہر نہیں جائیں گے۔29 جون کوحتمی راؤنڈ شروع کریں گے اور امید ہے کہ جون کے آخری اور جولائی کے پہلے ہفتے کے اندر اندر دودھ کا دودھ اور پانی کا پانی ہوجائے گا۔ کمیشن کا سیاست سے کوئی تعلق نہیں اور نہ ہی کمیشن سیاسی معاملے میں الجھے گا۔ مزید سماعت 29 جون تک ملتوی کرتے ہوئے کمیشن نے تحریک انصاف اور مسلم لیگ (ن) کے درمیان کمیشن بنانے کے معاہدے کی مفاہمتی دستاویز طلب کرلی، کمیشن نے قرار دیا ہے کہ دونوں جماعتوں کے درمیان دستخط شدہ ایم او یوز کے بغیر اس آرڈیننس کو نہیں سمجھا جاسکتا جو حکومت نے کمیشن بنانے کیلئے رضا کارانہ طور پر جاری کیا تھا۔

مزید : صفحہ اول