افریقہ،گدھ کے مغز کو تمباکو میں بھر کر پینے لگے،وجہ انتہائی دلچسپ

افریقہ،گدھ کے مغز کو تمباکو میں بھر کر پینے لگے،وجہ انتہائی دلچسپ

نیروبی (نیوز ڈیسک) دنیا کے ہر خطے میں توہمات پائے جاتے ہیں لیکن افریقہ کے چند ممالک میں پائے جانے والے توہمات جہالت اور گمراہی کی انتہاؤں کو پہنچے ہوئے ہیں۔ افریقہ میں غیر معمولی صلاحیتوں کے حصول کے لئے ہمیشہ سے عجیب و غریب نسخوں کا استعمال کیا جاتا رہا ہے لیکن گدھ کے مغز کو تمباکو میں بھر کر پینا وہ نسخہ ہے جو نہ صرف انتہائی ناقابل یقین ہے بلکہ اس نے افریقی گدھوں کی نسل کو بھی خاتمے سے دوچار کر دیا ہے۔افریقہ میں بعض دیہاتی اور جنگلی قبائل کے لوگوں میں یہ نظریہ پایا جاتا ہے کہ گدھ کے مغز کو سگریٹ میں بھر کر پینے سے قسمت کھل جاتی ہے اور نہ صرف لا ٹری جیتنے کے امکانات روشن ہو جاتے ہیں بلکہ مستقبل بینی کی صلاحیت اور دولت کے حصول کے مواقع بھی بڑھ جاتے ہیں۔ گدھ کے مغز کے سگریٹ تیار کرنے کا عمل آسان نہیں ہے۔ شکاری اس مقصد کے لئے اپنے شکار کئے ہوئے جنگلی جانوروں کے جسم میں زہر بھر کر انہیں جنگل میں چھوڑ دیتے ہیں، جب گدھ انہیں کھاتے ہیں تو ان کی موت ہو جاتی ہے۔ مردہ گدھوں کو اکٹھے کر کے ان کے مغز نکا لئے جاتے ہیں اور پھر انہیں خشک کرنے کے بعد پیس کر پاؤڈر بنا لیا جاتا ہے، اور اس پاؤڈر کو سگریٹ میں بھر کر پیا جاتا ہے۔سائنسی جریدے PLOS ONE میں شائع ہونے والی ایک تحقیق میں بتایا گیا ہے کہ گدھ کے مغز کو سگریٹ میں بھر کر پینے کی روایت نے اس پرندے کی نسل کو خاتمے کے قریب پہنچا دیا ہے اور جانوروں کے تحفظ کے لئے کام کرنے والے ادارے بچے کھچے گدھوں کو بچانے کے لئے سخت کوششیں کر رہے ہیں۔

مزید : علاقائی