کاشتکار کماد کی جدید پیداواری ٹیکنا لوجی اپنا کر 2000 من فی ایکڑ تک پیداوار حاصل کرسکتے ہیں، زرعی ماہرین

کاشتکار کماد کی جدید پیداواری ٹیکنا لوجی اپنا کر 2000 من فی ایکڑ تک پیداوار ...

لاہور (اے پی پی)کاشتکار کماد کی جدید پیداواری ٹیکنا لوجی اپنا کر 2000 من فی ایکڑ تک پیداوار حاصل کرسکتے ہیں۔زرعی ماہرین کے مطابق کماد کی فصل سے اچھی پیداوار کے حصول کے لئے اثرانداز کئی عوامل میں سے حملہ آور کیڑوں پر کنٹرول حاصل کرنا انتہائی ضروری ہے ۔ اگر ان کیڑوں کا بروقت تدارک نہ کیا جائے تو یہ پیداوار میں بہت بڑی کمی کا سبب بنتے ہیں۔انہوں نے کہاکہ کماد کے ان ضرر رساں کیڑوں میں دیمک، جڑ، تنے اور چوٹی کے گڑوویں/بورر، گرداسپوری بورر، گھوڑا مکھی، سفید مکھی اور مائٹس شامل ہیں۔

مزید : کامرس