چینی شہریوں کو ویزوں کے اجراءمیں موجود خامیوں کو دور کیا جائے: چوہدری نثار

چینی شہریوں کو ویزوں کے اجراءمیں موجود خامیوں کو دور کیا جائے: چوہدری نثار
چینی شہریوں کو ویزوں کے اجراءمیں موجود خامیوں کو دور کیا جائے: چوہدری نثار

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان نے چینی شہریوں کو بزنس اور ورک ویزوں کے اجراءکیلئے شرائط اور تقاضوں پر نظرثانی کے حوالہ سے ہدایات دیتے ہوئے کہا ہے کہ چینی شہریوں کو ویزوں کے اجراءکے حوالہ سے تمام خامیوں کو دور کیا جائے.

عید الفطر کے موقع پر ریلوے سٹیشنز اور ٹرینوں کو بھرپور سیکورٹی دی جائے: سعد رفیق

وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان کی زیر صدارت وزارت داخلہ میں اعلیٰ سطحی اجلاس ہوا ہے جس میں وزارت داخلہ نے چینی شہریوں کو بزنس اور ورک ویزوں کے اجراءکیلئے شرائط اور تقاضوں پر نظرثانی کے حوالہ سے اہم پالیسی فیصلہ کیا ہے جس کا مقصد ویزوں کے اجراءکے عمل میں شفافیت کو یقینی بنانا اور پاکستان اور چین کے مابین ویزہ فرینڈلی رجیم کے غلط استعمال کو روکنا ہے۔ وزارت داخلہ نے مختلف ویزہ کیٹگریز پر پاکستان کے دورہ پر آنے والے چینی شہریوں کو زیادہ سے زیادہ سیکورٹی کو یقینی بنانے اور چینی شہریوں کو ویزوں کے اجراءکے سارے عمل کو ریگولیٹ کرنے اور اسے بہتر بنانے کے سلسلہ میں یہ اہم فیصلہ کیا ہے۔

وزیر داخلہ کی زیر صدارت اجلاس میں پاکستانی ویزوں کے اجراءکیلئے سفارتخانوں کو گھوسٹ کمپنیوں کی جعلی دستاویزات کی فراہمی کے بعض واقعات کا نوٹس لیتے ہوئے فیصلہ کیا گیا کہ مستقبل میں چینی شہریوں کو بزنس ویزے اور آمد پر ویزے چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری سے تصدیق شدہ انویٹیشن اور اسائنمنٹ لیٹر اور کمرشل اتاشی اور دوسرے پاکستان کے متعلقہ آفیسرز جو بیرون ملک کاروباری سرگرمیوں کے فروغ کیلئے تعینات ہیں، کے خط پر ہی جاری کئے جائیں گے۔

اجلاس میں وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان کے علاوہ سیکرٹری داخلہ، ایڈووکیٹ جنرل، چیئرمین نادرا، ڈی جی امیگریشن اینڈ پاسپورٹس، ڈی جی وزارت خارجہ اور وزارت داخلہ، ایف آئی اے اور نادرا کے سینئر حکام نے شرکت کی۔

مزید : قومی /اہم خبریں