سعودی عرب کا گرین کارڈ اور مستقل رہائش؟ اب یہ بھی ممکن ہوگا، سعودی حکومت نے سب سے بڑا اعلان کردیا

سعودی عرب کا گرین کارڈ اور مستقل رہائش؟ اب یہ بھی ممکن ہوگا، سعودی حکومت نے ...
سعودی عرب کا گرین کارڈ اور مستقل رہائش؟ اب یہ بھی ممکن ہوگا، سعودی حکومت نے سب سے بڑا اعلان کردیا

  

ریاض (مانیٹرنگ ڈیسک) سعودی حکومت کے اس اعلان نے غیر ملکیوں کو خوشی سے نہال کردیا ہے کہ اب سعودی عرب بھی امریکی گرین کارڈ سسٹم کی طرز پر غیر ملکیوں کو مستقل اقامت کا حق دے گا، جبکہ اس نئے نظام کو متعارف کروانے کے لئے عملی اقدامات کا سلسلہ تیز کر دیا گیاہے ۔

سعودی گزٹ کی رپورٹ کے مطابق پرنس محمد بن سلمان نے بلوم برگ کو دئیے گئے ایک انٹرویو میں کہا کہ ”گرین کارڈ جیسا پروگرام اور کفیلوں کو یہ اجازت دینا کہ وہ غیر ملکیوں کو اپنے آفیشل کوٹہ سے زائد تعداد میں مخصوص فیس ادا کرکے ملازمت پر رکھ سکیں، ہر سال 10ارب ڈالر (تقریباً 10کھرب پاکستانی روپے) کی آمدن کا ذریعہ بنے گا۔“

اگر یہ کام ہو جاتا تو سعودی عرب کا تیل خطرے میں پڑسکتا تھا، سعودی عرب نے دہشتگردوں کی بہت بڑی سازش ناکام بنادی

لیبر کمیٹیوں کی فیڈریشن کے چیئرمین ندال رضوان نے اس بارے میں بات کرتے ہوئے امید ظاہر کی کہ نئے نظام کو نافذ کرنے کیلئے ایک خود مختار ادارہ قائم کیا جائے گا۔ کابینہ کی نگرانی میں یہ ادارہ نئے نظام کے نفاذ کو یقینی بنائے گا۔ اس میں وزارت اقتصادیات و پلاننگ، وزارت داخلہ، وزارت محنت، وزارت کامرس و انڈسٹری اور وزارت خزانہ کے نمائندے شامل ہوں گے۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ نیا نظام سعودی عرب کیلئے بے پناہ معاشی و سماجی فوائد کا حامل ہوگا۔ غیر سعودی بھی سعودی شہریوں کی طرح زکوٰة، ویلیو ایڈڈ ٹیکس اور انشورنس پریمیم ادا کریں گے۔ انہیں مملکت میں زمین خریدنے کی بھی اجازت ہوگی اور وہ کاروبار، صنعتیں اور خدمات فراہم کرنے والی کمپنیاں بھی چلاسکیں گے۔

غیر ملکیوں نے بھی اس اعلان پر خوشی کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ اس فیصلے سے غیر ملکیوں میں اعتماد پیدا ہوگا اور وہ مملکت کو اپنا مستقل گھر کہہ سکیں گے، جو ایک دیرینہ خواب تھا۔

مزید : عرب دنیا