’’یہ جنگ ہوئی تو ہم چین کے ساتھ ہوں گے ‘‘ روس نے تہلکہ خیز اعلان کر دیا ، امریکہ کو دن میں تارے دکھا دئیے

’’یہ جنگ ہوئی تو ہم چین کے ساتھ ہوں گے ‘‘ روس نے تہلکہ خیز اعلان کر دیا ، ...

ماسکو(مانیٹرنگ ڈیسک) امریکہ تجارتی میدان میں چین کو پیچھے دھکیلنے کے لیے آئے روز نئے اقدامات اٹھا رہا ہے اور جواب میں چین کی طرف سے بھی انتہائی سخت لب و لہجہ اپنایا جا رہا ہے۔ غالب امکان ہے کہ دونوں ملکوں میں جلد تجارتی جنگ چھڑ جائے گی۔ اب اس حوالے سے روس نے ایسا تہلکہ خیز اعلان کر دیا ہے کہ امریکہ کو دن میں تارے دکھا دیئے ہیں۔ نیوز ویک کی رپورٹ کے مطابق روس کے وزیر برائے معاشی ترقی میکسم اوریشکن نے اعلان کیا ہے کہ ’’اگر امریکہ اور چین میں تجارتی جنگ چھڑی تو ہم اس میں چین کا ساتھ دیں گے اور ہم اس کے لیے پوری طرح تیار ہیں۔‘‘

میکسم اوریشکن کا کہنا تھا کہ ’’امریکی صدر ڈونلڈٹرمپ کی معاندانہ تجارتی پالیسیاں چین اور یورپی یونین کو مجبور کر رہی ہیں کہ وہ جواب میں امریکہ کے تجارتی ٹیرف پر حملہ آور ہوں تاکہ اس سے امریکی مصنوعات کی ان کے ممالک میں حوصلہ شکنی ہو۔ صدر ٹرمپ کی ان پالیسیوں کی وجہ سے روس کی سٹیل اور ایلومینیم کی مصنوعات بھی متاثر ہو رہی ہیں۔ ایسے میں ورلڈ ٹریڈ آرگنائزیشن کی طرف سے روس کو جو حقوق دیئے گئے ہیں ہم ان کو بروئے کار لائیں گے۔ہمارا مقصد شفاف عالمی تجارت کو یقینی بنانا ہے جس کے لیے ہم ہرممکن اقدام اٹھائیں گے۔‘‘ واضح رہے کہ صدر ٹرمپ نے رواں سال مارچ میں سٹیل کی درآمد پر 25اور ایلومینیم پر 10فیصد ٹیرف لاگو کر دیا تھا، جن کا مقصد بالخصوص چین کی سٹیل اور ایلومینیم کی مصنوعات کو ٹارگٹ کرنا تھاتاہم اس سے باقی دنیا کی امریکہ کو برآمدات بھی متاثر ہوئیں۔ چنانچہ اس تجارتی جنگ میں بھارت اور کئی یورپی ممالک پہلے ہی چین کا ساتھ دینے کے اعلانات کر چکے ہیں اور اب روس بھی اس کی حمایت میں آگے آ گیا ہے۔

مزید : بین الاقوامی