غیر ملکی سرمایہ کاری میں 49فیصد کمی تشویشناک ہے،زاہد بخاری

غیر ملکی سرمایہ کاری میں 49فیصد کمی تشویشناک ہے،زاہد بخاری

  

لاہور(نیوزنیوز)پاکستان انٹرپرنیورزفورم کے سیکرٹری اطلاعات و آل پاکستان پیپر مرچنٹ انصاف گروپ پینل کے سیکرٹری جنرل زاہد بخاری نے غیر ملکی سرمایہ کاری میں 49فیصد کمی پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ اسٹیٹ بینک کی رپورٹ کے مطابق رواں مالی سال کے پہلے 11ماہ کے دوران براہ راست غیر ملکی سرمایہ کاری (ایف ڈی آئی) میں تیزی سے ہوتی ہوئی کمی کے باعث 49فیصد تک کمی ریکارڈ کی گئی ہے انہوں نے کہا کہ بیرونی سرمایہ کاری کم ہونے کا رجحان موجود ہ نئی حکومت کے اقتدار میں آنے سے مسلسل جاری ہے ان خیالات کا اظہار انہوں نے صنعتکاروں کے وفد سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

زاہد بخاری نے کہا کہ جولائی سے مئی کے دوران کل ایف ڈی آئی ایک ارب60کروڑ 60لاکھ ڈالر ہوگئی جو گزشتہ سال کے اسی عرصے کے دوران3ارب 16کروڑ 10لاکھ ڈالر تھی انہوں نے کہا کہ حکومت کے سخت اقدامات سے بیرونی سرمایہ کاری میں کمی ہوئی ہے غیر ملکی سرمایہ کاری میں اضافہ کیلئے مناسب و ساز گار ماحول ازحد ضروری ہے۔غیر ملکی سرمایہ کاروں کو پاکستان کے اندر نئی صنعتوں کے قیام اور سرمایہ کاری کی ترغیب دینے کیلئے صنعتی مقاصد کیلئے گیس و بجلی کی قیمتوں میں کمی اورنئی انڈسٹریل زون میں اراضی کی فراہمی اور غیر ملکی سرمایہ کاروں کو مراعات دینے سی ہی غیر ملکی سرمایہ کاری بڑھے گی۔غیر ملکی سرمایہ کاری میں اضافہ کیلئے حکومت کو مثبت اقدامات اٹھانا ہونگی اسی طرح ملک ترقی و خوشحالی کی راہوں پر گامزن ہوگا۔

مزید :

کامرس -