کالا جادو کرنے کے لئے اپنے ہی بچوں کو ٹارچر کا نشانہ بنانے والی پاکستانی خاتون

کالا جادو کرنے کے لئے اپنے ہی بچوں کو ٹارچر کا نشانہ بنانے والی پاکستانی ...
کالا جادو کرنے کے لئے اپنے ہی بچوں کو ٹارچر کا نشانہ بنانے والی پاکستانی خاتون

  

لاہور (مانیٹرنگ ڈیسک) لاہور میں کالا جادو کرنے کے لیے اپنے ہی بچوں کو جلانے اور تشدد کا نشانہ بنانے والی ماں کو گرفتار کر لیا گیا ہے۔ ڈیلی ڈان کے مطابق قلعہ گجر سنگھ پولیس سٹیشن میں سائمن مسیح نامی شخص نے رپورٹ درج کروائی تھی کہ اس کی بیوی انیتا نے ان کے دو بچوں 3سالہ بیٹی مریم اور 2سالہ بیٹے جارج کو اپنی خالہ کے گھر لیجا کر موم بتی اور آہنی راڈ سے جلایا اور تشدد کا نشانہ بنایا ہے۔

سائمن مسیح کے مطابق اس کی بیوی چند دن قبل بچوں کو لے کر اپنی خالہ کے گھر گئی تھی۔ گزشتہ روز وہ اپنے بچوں سے ملنے گیا تو اس نے دیکھا کہ اس کی بیٹی بیڈ کے ساتھ بندھی ہوئی تھی اور بیٹا ایک صوفے کے ساتھ اور ان دونوں کے درمیان میں ایک بھوری بکری بندھی ہوئی تھی۔ سائمن کی بیوی اور اس کی خالہ نے یہ سب کچھ کالے جادو کے عمل کے لیے کر رکھا تھا۔ سائمن کے مطابق اس کے بچوں کے جسم پر جگہ جگہ جلائے جانے اور تشدد کیے جانے کے نشانات تھے۔

دونوں خواتین کی طرف سے شدید مزاحمت کے باوجود سائمن وہاں سے اپنے بچوں کو نکالنے میں کامیاب ہو گیا اور انہیں میو ہسپتال لے گیا جہاں وہ تاحال زیرعلاج ہیں۔ہسپتال میں اب دونوں بچوں کی حالت بہتر بتائی جاتی ہے۔ ایس پی انویسٹی گیشن سول لائنز ڈویژن عاصم افتخار کا کہنا ہے کہ خواتین کے خلاف مقدمہ درج کر لیا گیا ہے اور وہ اس وقت پولیس کی حراست میں ہیں۔

مزید :

علاقائی -پنجاب -لاہور -