سکھ یاتریوں کو ڈالرز کر نسی پاکستان لانے کا پابندکر نے کی تجویز ،گورنر پنجاب نے حمایت کر دی

سکھ یاتریوں کو ڈالرز کر نسی پاکستان لانے کا پابندکر نے کی تجویز ،گورنر ...
 سکھ یاتریوں کو ڈالرز کر نسی پاکستان لانے کا پابندکر نے کی تجویز ،گورنر پنجاب نے حمایت کر دی

  

لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن) گورنر پنجاب چوہدری محمدسرور نے سکھ یاتریوں کو بھارتی روپے کی بجائے ڈالرز میں کر نسی پاکستان لانے کا پابندکر نے کی تجویزکی حمایت کرتے ہوئے کہا ہے کہ مشیر خزانہ سمیت متعلقہ وزراء اور اداروں کیساتھ اس معاملے پر جلد بات چیت کر کے کوئی فیصلہ کر یں گے،پاکستان میں مذہبی مقامات پر سیاحت کو فروغ دیکر کم ازکم سالانہ3ارب ڈالر ز حاصل کرنے کا ٹارگٹ بنا رہے ہیں،بابا گرونانک کے550جنم دن کے موقعہ پر پہلی مرتبہ بھارت سے10ہزار اور دنیا بھر سے تقریبا1لاکھ سکھ یاتریوں کے پاکستان کیلئے ویز ہ دیا جائیگا، سیاحت کے فروغ کیلئے سردار بھگت سنگھ کی رہائش گاہ کی بھی تزہین آرائش کر نے کا فیصلہ کر لیا ہے،ننکانہ صاحب میں ریلوے سٹیشن کی تزہین آرائش اور دیگر ترقیاتی منصوبوں کو نومبر سے پہلے مکمل کر لیا جائیگا۔

 ننکانہ صاحب میں گرودوارہ جنم استھان‘ڈپٹی کمشنر آفس ننکانہ کے دورے کے بعد پر یس کانفر نس سے گفتگو کرتے ہوئے گورنر پنجاب چوہدری محمدسرور نے کہا کہ بھارت جو مرضی کر یں ہم کر تارپور منصوبے کو پاکستان میں جلدازجلد مکمل کر لیں گے اور دنیا کو بتائیں گے کہ بھارت اس معاملے میں کتنی ہٹ دھرمی کا مظاہرہ کر رہا ہے،ماضی میں بھارت پاکستان کیخلاف اپنے جھوٹ کے ذریعے ہمیں دنیا میں بدنام کر تا رہا مگر پلوامہ واقعے کے بعد پاکستان نے اپنی کامیاب حکمت عملی کی وجہ سے بھارت کو دنیا کے سامنے نہ صرف بے نقاب کر دیا بلکہ اس کو عسکری،سفارتی اور سیاسی محاذ پر عبرتناک شکست دی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ماضی میں پاکستان میں کسی بھی تقریب میں شر کت کیلئے زیادہ سے زیادہ بھارت سے 3ہزار سکھ یاتریوں کو پاکستان نے ویزہ دیاجاتا ہے مگر پہلی بار تحر یک انصاف کی حکومت نے یہ فیصلہ کیا ہے کہ ہم صرف بھارت سے آنیوالے سکھ یاتریوں کو بابا گرونانک کے جنم کی تقریبات کیلئے دس ہزارویز ے جاری کر یں گے جسکے لیے وفاقی اور پنجاب حکومت کے تمام ادارے ملکر کام کر رہے ہیں اور ننکانہ صاحب اور کر تار پور سمیت جہاں بھی سکھ یاتر ی جائیں گے انکو فول پروف سیکورٹی انتظامات سمیت تمام سہولتوں کی فراہمی کو یقینی بنائیں گے جسکے لیے کمشنر لاہور کی سر براہی میں کمیٹی بھی قائم کردی ہے جو بڑی تیزی کے ساتھ ان انتظامات کیلئے کام کر رہی ہے۔

ایک سوال کے جواب میں گور نر پنجاب چوہدری محمدسرور نے کہا کہ پرویز مشرف(ن) لیگ اور پیپلزپارٹی نے پینے کے صاف پانی کے منصوبوں میں اربوں روپے لگائے مگر آج بھی ان حکومتوں کے دورے میں لگنے والے90فیصد سے زائد فلٹریشن پلانٹس بند پڑے ہیں لیکن اب تحر یک انصاف کی حکومت نے صوبے میں پنجاب آب پاک اتھارٹی قائم کر دی ہے جس کا بورڈ مکمل ہو چکا ہے اور اس کے ذریعے پانچ سالوں کے دوران پورے پنجاب میں پینے کے صاف پانی کی فراہمی کا وعدہ پورا کر یں گے اور اس اتھارٹی میں شفافیات کی نئی مثال قائم کر یں گے، اس اتھارٹی سے وابستہ کسی بھی فرد کو ایک پیسے کی بدعنوانی یا کر پشن کر نے کی اجازت نہیں دی جائیگی بلکہ عوام کے ایک ایک پیسے کی حفاظت کریں گے۔

چوہدری محمدسرور نے ایک سوال کے جواب میں وزیر اعظم عمران خان جب سے اقتدار میں آئے ہیں وہ بھارت کو مذاکرات کی دعوت دے رہے ہیں کیونکہ اس میں کسی کو شک نہیں ہونا چاہیے کہ پاک بھارت مسائل بات چیت کے ذریعے ہی حل ہوں گے،ہم یہ بھی مطالبہ کرتے ہیں کہ بھارت مقبوضہ کشمیر میں مظالم کو بند کر یں اور اقوام متحدہ کی قرادادوں کے مطابق مسئلہ کشمیر کو حل کر یں۔ انہوں نے کہا کہ سکھ راہنماؤں نے یہ تجویز دیں ہے کہ بھارت سے آنیوالے سکھ یاتریوں کو پابند کیا جائے کہ وہ پاکستان آتے وقت بھارتی کر نسی کی بجائے ڈالرز کرنسی پاکستان لیکر آئیں میں اس تجویز سے اتفاق کر تاہوں، اگر ایسا ہوجائے تو یہ پاکستان کی معاشی صورتحال کیلئے بھی فائدہ مند ہی ہوگا لیکن اس بارے میں فیصلہ یقینی طور پر مشیر خزانہ سمیت متعلقہ محکموں کیساتھ ملکر ہی کیاسکتا ہے، میں اس حوالے سے ضرور ان سے بات کروں گے۔

مزید :

علاقائی -پنجاب -ننکانہ صاحب -