پنجاب میں قرضوں کی تحقیقات کیلئے کمیشن لازمی بنائینگے،لوٹنے والوں کے خلاف کارروائی کرینگے:راجہ بشارت

پنجاب میں قرضوں کی تحقیقات کیلئے کمیشن لازمی بنائینگے،لوٹنے والوں کے خلاف ...
پنجاب میں قرضوں کی تحقیقات کیلئے کمیشن لازمی بنائینگے،لوٹنے والوں کے خلاف کارروائی کرینگے:راجہ بشارت

  

لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن)صوبائی وزیر قانون وبلدیات پنجاب  راجہ بشارت نے کہا ہے کہ جن لوگوں نے صوبے کو لوٹا ہے ان کے خلاف قانونی کارروائی کریں گے اور انشااللہ پنجاب میں سابق دور میں لئے گئے قرضہ جات کی تحقیقات کے لئے کمیشن بنانے کے اعلان کوبھی عملی جامہ پہنائیں گے۔

پنجاب اسمبلی کے باہر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے صوبائی وزیر راجہ بشارت نے کہاکہ جو ریکارڈ سامنے آرہا ہے اس سے پتہ چلتا ہے کہ گذشتہ دس سال میں سرکاری خزانے کو بے دردی سے لوٹا گیا اور شیرِمادر سمجھتے ہوئے ذاتی استعمال میں لایا گیا۔راجہ بشارت نے کہا کہ صرف پنجاب ہاس اسلام آباد میں رہنے اور کھابے اڑانے والوں کے ذمے پانچ کروڑ سے زائد واجب الادا ہیں،ن لیگ کے سینیٹر پرویز رشید اور ان کی صاحبزادی نے نوے لاکھ سے زائد تا حال ادا نہیں کیےلیکن ہم سب ذمہ داروں سے ایک ایک پائی وصول کر کے سرکاری خزانے میں جمع کرائیں گے۔انہوں نے تنبیہہ کی کہ جن لوگوں نے حکومتی وسائل کو استعمال کیا اوران کے ذمہ سرکاری واجبات ہیں وہ ادا کریں۔راجہ بشارت نے کہا کہ تمام نادہندگان کوایک دو دن میں لیگل نوٹس بھیجوا رہے ہیں، اگر انہوں نے پھر بھی ادائیگی نہ کی تو قانونی کارروائی کی جائے گی۔

وزیر قانون پنجاب  نے مزید بتایا کہ پنجاب میں قرضوں اور مالی بے ضابطگیوں کی تحقیقات کے لئے مجوزہ کمیشن میں اپوزیشن کوبھی نمائندگی دیں گے،اراکین اسمبلی کی تنخواہوں کے بل کے معاملے کو اسی سیشن میں حل کر لیا جائے گا۔راجہ بشارت نے کہا کہ آصف زرادری عام آدمی کی بات نہ کریں کیونکہ عام آدمی نے اس ملک کو نہیں لوٹا بلکہ عام آدمی تو ان جیسے خاص آدمیوں کی لوٹ مار کا خمیازہ بھگت رہا ہے۔انہوں نے کہا کہ وزیراعلی پنجاب عثمان بزدار کی قیادت میں پی ٹی آئی کی حکومت لٹیروں کے خلاف گھیرا تنگ کر رہی ہے اور ان سے لوٹی ہوئی دولت کی واپسی کے لئے پرعزم ہے۔

مزید :

علاقائی -پنجاب -لاہور -