ویزاکا چھوٹے کاروباروں کی مدد کیلئے دراز کے ساتھ معاہدہ

ویزاکا چھوٹے کاروباروں کی مدد کیلئے دراز کے ساتھ معاہدہ

  

لاہور(پ ر)ڈیجیٹل ادائیگیوں میں عالمی لیڈر Visa نے ملک کی آن لائن مارکیٹ پلیس دراز کے ساتھ پاکستان میں Where You Shop Matters" (WYSM)“ کاوش کا آغاز کیا ہے۔ اس مہم کا مقصد COVID-19 عالمی وباء کی وجہ سے بری طرح متاثر ہونے والے چھوٹے کاروباروں کو بااختیار بنانا اور انہیں مدد فراہم کرنا ہے اور یہ وسطی و مشرقی یورپ، مشرق وسطیٰ و افریقا (CEMEA) ریجن میں Visaکی پھیلی ہوئی وسیع ترکوششوں کا حصہ ہے۔ سمال اینڈ میڈیم انٹر پرائزز (ایس ایم ایز) کا شعبہ جس کا پاکستان کی مجموعی قومی پیداوار میں 40 فیصد حصہ ہے، COVID-19 کے باعث تجارتی سرگرمیوں میں مندی کی وجہ سے شدید ترین متاثر ہوا ہے۔ سماجی فاصلہ کے اقدامات نے محدود طلب اور رسد چین کی رکاوٹوں کے ساتھ خاص طور پر ان لوگوں کو متاثر کیا ہے جو زیادہ تر آف لائن ہیں اور زاتی طور بازار جانے پر انحصار کرتے ہیں۔Visaکے کنٹری منیجر پاکستان،کامل خان نے کہا کہ وبائی مرض نے اس بات کو تبدیل کیا ہے کہ صارفین کس طرح اور کہاں خریداری کرتے ہیں جن میں سے اکثریت ڈیجیٹل ادائیگیوں کو اپناتی ہے اور آن لائن پلیٹ فارمز پر منتقل ہوتی ہے۔

دریں اثناء پاکستان میں چھوٹے کاروباروں بالخصوص کیش پر کام کرنے والے دکانداروں پر بری طرح اثر پڑا ہے اور وہ اپنی بقاء کے لئے کوششیں کر رہے ہیں۔ اگرچہ یہ تبدیلیاں چیلنجوں کو پیش کرتی ہیں۔

، ان تبدیلیوں نے پاکستان میں مرچنٹس کے لئے اپنے آپریشنز کو تبدیل کرنے اور نئے ممکنہ کسٹمر بیس آن لائن کے ساتھ مسلسل آمدن کو بڑھانے کے حوالے سے متعدد مواقع پیش کئے ہیں۔ ہمارا ”Where You Shop Matters“ اقدام مقامی دکانداروں کو ان غیر متوقع چیلنجز سے نکلنے اور ڈیجیٹل کامرس سے فائدہ اٹھاتے ہوئے کاروبار میں واپس جانے کے لئے بااختیار بنانے میں مدد دیتا ہے۔دراز پاکستان کے منیجنگ ڈائریکٹر احسان سایہ نے کہا کہ اس وباء کے آغاز کے بعد سے ہماری کوششیں 30 ہزار مارکیٹ سیلرز کی بڑھتی ہوئی کمیونٹی کو با اختیار بنانے اورپورے ملک میں یم ایم ایز کو معاشی بدحالی سے محفوظ بنانے کی جانب مرکوز رہیں۔ ہم چھوٹے کاروباروں کے لیے ڈیجیٹل طریقہ کار کی بڑھتی ہوئی شرح سے فائدہ اٹھانے کے لیے مواقع پیدا کرنے کے لیے پر عزم ہیں جسے ہم نے ای کامرس کی طرف پاکستان کے کسٹمرزکے عبور میں مدد دیتے ہوئے دیکھا ہے۔ ہمیں Visaکے ساتھ اپنی شراکت داری پر فخر ہے اور اس بات کا یقین ہے کہ اس سے پاکستان کے ایس ایم ای کے اہم سیکٹر میں مزید تیزی آئے گی۔ WYSM کاوش کا مقصد پاکستان میں چھوٹے کاروباروں کو Visa سمال بزنس حب تک رسائی فراہم کرتے ہوئے ان کی مدد کرنا ہے۔ Visaسمال بزنس حب ایک مرچنٹ پلیٹ فارم ہے جو اس بارے میں با وسائل ٹولز اور معلومات فراہم کرتا ہے کہ چھوٹے کاروبار کو کس طرح شروع، چلایا اور فروغ دیا جائے۔دراز کے ساتھ WYSM کی شراکت داری کے حصے کے طور پر Visa یہ بتائے گا کہ پاکستان میں کس طرح چھوٹے کاروبار دراز کے آن لائن مارکیٹ پلیس پلیٹ فارم،رسل و رسائل کا انفرا اسٹرکچر اور تربیتی مدد استعمال کرتے ہوئے کامیاب ہوئے ہیں۔شراکت داری پاکستان میں دراز پر خریداری کے لیے Visa صارفین کی حوصلہ افزائی کرے گی جہاں 30 ہزار سے زائد کاروبار، ملک کے تمام حصوں سے دراز کے آن لائن پلیٹ فارم کے ذریعے اپنی مصنوعات فروخت کر رہے ہیں۔ دراز اورVisaدونوں نے وباء کے پھیلاؤ کے بعد سے چھوٹے کاروباروں سے تعاون کیلئے الگ الگ بہت سے اقدامات کا آغاز کیا ہے۔ دراز ہم قدم پروگرام جس کے ذریعے ایم ایز ایک ایسی مضبوط کاروباری اورمالی حمایت حاصل کرتے ہیں جو انھیں selling online شروع کرنے میں مدد دے سکتی ہے۔،جس میں اس سال مئی اور جون کے مہینوں کے لیے کمیشن فیس کا استثنیٰ؛ اپریل کے شروع میں Visa فاؤنڈیشن کی پانچ سال کیلئے دنیا بھر کے چھوٹے اور مائیکرو کاروباروں کی مدد کے لئے 210 ملین ڈالر کی مدد کا اہم اعلان بھی شامل ہے۔ WYSM اقدام ویزا اور دراز کے ڈیجیٹل اور نیٹ ورک استحکام کو مزید فائدہ پہنچائے گا۔ خریداری اور سیکورٹی سے متعلق رویوں کے بارے میں COVID-19 وباء کے اثرات کو سمجھنے کے لئے پاکستان میں مکی جانے والی Visaکی ایک حالیہ اسٹڈی میں بتایا گیا ہے کہ وائرس کے اثرات نے پاکستان میں صارفین کے فزیکل اسٹور شاپنگ طرز عمل کو نمایاں طور پر بدل دیا ہے جبکہ 43 فیصد نے اسٹور میں خریداری کو نمایاں طور پر محدود کر دیا ہے۔ جب وہ اسٹور میں خریداری کرتے ہیں تو 55 فیصد صارفین ڈیجیٹل ادائیگیوں کا استعمال کرتے ہیں جن میں سے اکثریت 51 فیصد موبائل والٹس استعمال کرتی ہے جبکہ بقیہ 48 فیصد چپ اور پن دونوں کارڈ استعمال کرتے ہیں اور 37 فیصد کانٹیکٹ لیس طریقہ استعمال کرتے ہیں۔اسی اسٹڈی میں یہ بھی انکشاف کیا گیا کہ وباء کے دوران نصف سے زائد صارفین (52 فیصد) زیادہ تر خریداری آن لائن کر رہے ہیں،جب کہ نصف 53% کیش آن ڈلیوری کی بجائے کارڈز یا ڈیجیٹل والٹس استعمال کر رہے ہیں۔صارفین کے رویوں میں ان رجحانات کے حوالے سے دراز کے ای کامرس انڈیکس نے نوٹ کیا کہ پاکستانی خریداروں کے ایک بڑے حصہ نے اس غیر یقینی صورتحال کے دوران اپنی خریداری کی ضرورت کے لئے ایک حل کے طور پر ای کامرس پلیٹ فارم کی نشاندہی کی ہے۔

مزید :

کامرس -