تاریخ کا بڑا سکالرشپ پروگرام شروع کررہے ہیں،وائس اف پاکستان

تاریخ کا بڑا سکالرشپ پروگرام شروع کررہے ہیں،وائس اف پاکستان

  

لاہور (پ ر)وائس اف پاکستان ایسی موومنٹ کا قیام عمل میں لا یا گیا ہے جس کا مقصد پاکستانیوں میں مثبت اورامید کی لہر اجاگر کی جائیگی کیونکہ پاکستان کو تعلیمی اور معاشی میدان میں استحکام یوتھ لائے گی ان خیالات کا اظہار چیئرمین vop عمر علی ملک نے اس کے اغراض و مقاصد پر گفتگو کرتے ہوئے کیا انھوں نے کہا کہ پاکستان کے تاریخ کا بڑا سکالرشپ پروگرام شروع کرنے جارہے ہیں جس میں ذہین طلبا اور طالبات جو دیہات کے علاوہ چھوٹے اور بڑے شہروں سے تعلق رکھتے ہوں گے اس ہونہار یوتھ کو سکالرشپ دئے جایئں گے۔عمر ملک نے کہا کہ اس کا طریقہ کار یہ ہوگا کہ نوجوان وائس اف پاکستان کی موبائل ایپ اعر ویب ساءئٹ پر اپلائی کریں گے سکالرشپ شفافیت اور میرٹ ہر دیا جائے گا جو قابلیت اور مارکس کے مطابق اس سکالرشپ پر پورا اترتا ہو گا اپلایء کرنے والوں کی خود کار طریقہ کار کے تحت سکروٹنی کمیٹی چھان بین کرے گی انھوں نے کہا کہ یہ سکالرشپ چاروں صوبوں کے علاوہ گلگت بلتستان آزاد کشمیر کی یوتھ کو دئے جایئں گے اور اسکا میرٹ وہ طلبا و طالبات ہیں جن کا شاندار تعلیمی گریڈ اور رزلٹ ہو گا چیئرمین وائس اف پاکستان عمر ملک کاکہنا تھا کہ ہم نے اس سکالرشپ کو کرونا کی وجہ سے شروع کیا ہے تاکہ وہ والدین جو کرونا سے مالی مشکلات کا شکار ہیں اور فیس نہیں دے سکتے تاہم سکالرشپ میں کامیاب ہونے والوں کو اخر میں اپنے ادارے کے پرنسپل سے سفارش کروانی ہو گی۔انھوں نے کہا کہ ان طلبا کو فوقیت دی جائے گی۔

جو کھیلوں میں بھی اچھا ریکارڈ رکھتے ہوں گے۔عمر ملک نے کہا کہ اس سکاکرشپ کا اغاز ستمبر تعلیمی سال سے ہوْجائے گا۔

انھوں نے مزید کہا کہ ہماری خواہش ہے کہ ملک میں نوجوان طبقہ فخر محسوس کرے کسی صورت میں یہ نہ سمجھت کہ وہ بت یارومددگار ہے پاکستانی قوم خود دار قومْ ہے اپنے ْوجوانوں کو سنبھالنا ہم? سب کا قومی فرض ہے بااثر باختیار اور ارباب اختیار کو چاہئیے کہ نیک نسل کے لئے اپنے تمام وسائل سامنے لایئں یوتھ کی کردار سازی میں عملی کام کریں ا ن کی مناسب مالی مدد کر کے قومی تربیت کی جائے اور روز گار کے مواقع زیادہ اے زیادہ فراہم کرنا ہماری مشترکہ قومی ذمہ داری ہے۔انھوں نے مزید کہا کہ یوتھ کو وائس اف پاکستان نہ صرف پاکستان میں بلکہ بیرون ملک بھی تعلیم کے مواقع فراہم کرے گی تاکہ ْواپس آکر ملک و قوم کی خدمت کر سکیں ہمیں اپنے باہر قائم سفارت خانوں کو فعال بنانا ہوْگا تاکہ وہ یوتھ کی رہنما کر سکیں

مزید :

کامرس -