ڈیرہ میں کرونا بے قابو‘ انتظامیہ فوٹو سیشن تک محدود‘ اویس خان لغاری

ڈیرہ میں کرونا بے قابو‘ انتظامیہ فوٹو سیشن تک محدود‘ اویس خان لغاری

  

ڈیرہ غازی خان(سٹی رپورٹر) پنجاب کے دیگر شہروں کی طرح ڈیرہ غازی خاں میں بھی کرونا وائرس کی وبا انتہائی شدت اختیار کر گئی ہے لیکن وبا سے بچاؤ کے لئے کوئی ٹھوس اقدامات نہیں کئے گئے وزیر اعلیٰ کے آبائی ضلع کی انتظامیہ میڈیا پر بیانات دینے وڈیوز اور سلفیوں سے آگے نہیں بڑھ رہی ان خیالات کا اظہار پاکستان مسلم لیگ ن پنجاب کے جنرل سیکرٹری سابق وفاقی وزیر سردار اویس احمد خاں لغاری ایم پی اے نے ڈسٹرکٹ ہیڈ کواٹر ہسپتال ڈیرہ غازی خاں کے دو معروف فزیشنز ڈاکٹر جاوید اقبال باجوانی ڈاکٹر خالد مسعود قیصرانی ایک نرس اور ایک پیرا میڈیک سمیت 21 افراد کی کرونا وائرس سے ہلاکت پر ایک تعزیتی بیان میں کیا ہے انھوں نے کہا کہ ڈیرہ غازی خاں میں کرونا وائرس کے خلاف برسر پیکار فرنٹ لائن فورس کے مجاہد انتہائی غیر محفوظ حالات میں اپنے فرائض سر انجام دے رہے ہیں انہیں ایس او پیز کے مطابق حفاظتی کٹس بھی دستیاب نہیں۔اویس لغاری نے گہری تشویش کا اظہار کرتے ہوئے مزید کہا ہے کہ ڈیرہ غازی خاں میں اب تک کرونا وائرس سے 20 افراد ہلاک ہو چکے ہیں جن میں دو ڈاکٹر ایک نرس اور ایک پیرا میڈیک بھی شامل ہیں جبکہ کرونا مریضوں کی تعداد 800 تک جا پہنچی ہے اس سنگین صورتحال کے باوجود وزیر اعلیٰ کے اپنے آبائی ضلع کی انتظامیہ محض کاغذی کاروائیوں میں مصروف ہے نہ کہیں لاک ڈاؤن ہے نہ ایس او پیز پر عمل ہوتے دکھائی دیتا ہے نہ ہی کہیں نام نہاد ٹائیگر فورس نظر آتی ہے۔انھوں نے کہا کہ وفاقی اور صوبائی حکومتوں کی ناقص حکمت عملی گومگو کی پالیسی اور غلط فیصلوں کی وجہ سے اب کرونا بے قابو ہوچکا ہے اویس لغاری نے عوام سے اپیل کی ہے کہ خدارا آپ ازخود احتیاطی تدابیر اختیار کریں حکومت کے بھروسہ پر نہ رہیں یہ نا ا ہل صرف باتیں بنانا اور جھوٹے لارے لگانا جانتے ہیں بلکہ انھوں نے کرونا وائرس کو بھی لوٹ مار کا ذریعہ بنایا ہوا ہے اوپر سے نیچے تک کرپشن کا بازار گرم ہے میڈیسن کمپنیوں کو کھلی چھوٹ دی ہوئی ہے ادویات کی قیمتوں پر حکومت کا کوئی کنٹرول نہیں ہے انھوں نے کہا کہ لاہور میں 90 کروڑ روپے کی لاگت سے بنایا گیا ایمرجنسی ہسپتال کرونا کی آڑ میں کرپشن کا شاہکار ہے جس کا افتتاح خود وزیراعظم نے کیا اور اسے اپنے وسیم اکرم پلس کا تاریخی کارنامہ قرار دیا تھا یہ ایمرجنسی ہسپتال صرف چند دن فنکشنل رہنے کے بعد سے بند پڑا ہے۔ اویس لغاری نے حکمرانوں سے مطالبہ کیا کہ کم ازکم کرونا وائرس سے متعلق سوشل میڈیا پر آئے روز چلنے والی جھوٹی سچی خبروں کا ہی نوٹس لے لو قوم کو اس شش وپنج سے نکال دو کہ کیا جھوٹ ہے کیا سچ ہے ورنہ عوام ہسپتالوں میں زہر کے ٹیکے لگائے جانے اور فی میت پانچ پانچ لاکھ روپے وصول کرنے کی خبروں کو سچ قرار دیتے ہوئے تمھارے گریبان پکڑے گی۔

اویس لغاری 

مزید :

ملتان صفحہ آخر -