بسوں، ویگنوں میں ”میزائل نصب“مسافروں کی زندگیوں کو خطرہ

بسوں، ویگنوں میں ”میزائل نصب“مسافروں کی زندگیوں کو خطرہ

  

کوٹ ادو(تحصیل رپورٹر) پیسوں کے لالچ میں ٹرانسپورٹ مالکان نے ہائی ایس ویگنوں بسوں میں میزائل نما سلنڈر سیٹوں کے نیچے نصب کردئے، تفصیلات کے مطابق حکومت کی جانب سے سی این جی اسٹیشنوں پر گیس کی فراہمی شروع ہونے اور مسافر گاڑیوں میں ایل پی جی سلنڈر لگا کر ایل پی جی گیس استعمال کرنے کا کام زور پکڑ گیا ہے، پیسوں کی لالچ میں ڈیزل کی بجائے سی این جی اور ایل پی جی گیس استعمال کرنے کیلئے گاڑیوں میں ناقص مٹیریل سے تیار شدہ نان رجسٹرڈ کمپنی کے میزائل نما خود ساختہ سی این جی سلنڈر کی تنصیب کا سلسلہ عروج پرہے،اس وقت کوٹ ادو کے ٹرانسپورٹ اڈوں سے چلنے والی تمام مسافر بسوں اور ویگنوں میں سیٹوں کے نیچے میزائل نما بڑے بڑے سلنڈر سی این جی اور ایل پی جی سٹاک کرنے کیلئے لگائے گئے ہیں جسکی وجہ سے مسافران میزائل نما سلنڈروں پر سوار ہو کر موت کی سواری پر سفر کرنے پر مجبور ہیں،دوسری طرف ڈرائیوروں نے گاڑیوں کی ٹینکیوں میں ڈیزل،پٹرول سٹاک ہونے سے بچانے کیلئے گاڑیوں کے اندر پلاسٹک کے کینوں میں پٹرول،ڈیزل ڈلواکر مسافروں کے سر کے اوپر سیٹوں کے ساتھ لٹکا دیتے ہیں جوکہ سی این جی،ایل پی جی ختم ہونے پر وہاں سے سپلائی شروع کر دیتے ہیں،کئی مسافر گاڑیوں میں سگریٹ نوشی بھی کرتے ہیں اور دیا سلائی جلانے سے کسی بھی وقت کوئی بڑا حادثہ رونما ہو سکتا ہے شہریوں،انسانی حقوق کی تنظیموں اور مسافروں نے ٹرانسپورٹروں کے اس خود ساختہ سی این جی سلنڈروں کی تنصیب پر احتجاج کرتے ہوئے سیکرٹری ٹرانسپورٹ،کمشنر ڈیرہ غازیخان،ڈی سی مظفر گڑھ انجینئر امجد شعیب خان ترین،،اسسٹنٹ کمشنر کوٹ ادو ڈاکٹر فیاض علی جتالہ ودیگر اعلیٰ حکام سے فوری طور پر نوٹس لیتے ہوئے ان کے خلاف اپریشن کرنے اور میزائل نما سلنڈر ختم کرنے کا مطالبہ کیا۔

خطرہ

مزید :

ملتان صفحہ آخر -