بھارت نے چین کے کس فوجی افسر کو قیدی بنایا؟ بھارتی میڈیا نے نیا شوشہ چھوڑ دیا

بھارت نے چین کے کس فوجی افسر کو قیدی بنایا؟ بھارتی میڈیا نے نیا شوشہ چھوڑ دیا
بھارت نے چین کے کس فوجی افسر کو قیدی بنایا؟ بھارتی میڈیا نے نیا شوشہ چھوڑ دیا

  

نئی دلی (ڈیلی پاکستان آن لائن) وادی گلوان میں چین کے ہاتھوں تسلی بخش چھترول کے بعد اب بھارتی میڈیا کی جانب سے  یہ دعویٰ شروع کردیا گیا ہے کہ جھڑپ میں صرف چین نے ہی بھارتی فوجیوں کو قید نہیں کیا تھا بلکہ بھارت نے بھی چینی فوجی کرنل کو پکڑا تھا۔

بھارتی میڈیا نے ذرائع کے حوالے سے دعویٰ کیا ہے کہ گلوان وادی میں جھڑپ کے دوران بھارتی فوجیوں نے چین کے کرنل رینک کے افسر کو قیدی بنالیا تھا۔ جب چین کی جانب سے بھارتی قیدیوں کو رہا کیا گیا تو اس کے بعد ہی اس کرنل کو چھوڑا گیا۔

اس حوالے سے بھارتی فوج کی جانب سے کوئی بیان جاری نہین کیا گیا، چین نے بھی اس کی تصدیق نہیں کی تاہم بھارتی میڈیا سابق آرمی چیف اور مرکزی وزیر وی کے سنگھ کے اس بیان کا حوالہ بھی دے رہا ہے جس میں انہوں نے کہا تھا کہ " چین نے ہی ہمارے فوجی نہیں لوٹائے، ہندوستان نے بھی چین کے کئی فوجیوں کو واپس کیا ہے۔"

خیال رہے کہ پیر کے روز لداخ کی وادی گلوان میں چین اور بھارتی فوجوں کے درمیان سرحد پر جھڑپ ہوئی تھی جس میں 20 بھارتی فوجی ہلاک اور 76 زخمی ہوگئے تھے۔ اس جھڑپ کے بارے میں یہ بھی دعویٰ کیا گیا تھا کہ چین نے بھارت کے ایک لیفٹیننٹ کرنل اور 3 میجرز سمیت 10 فوجیوں کو قید کیا تھا جنہیں بعد میں مذاکرات کے نتیجے میں رہا کردیا گیا، تاہم بھارتی فوج نے اس کی تردید کی ہے۔

مزید :

بین الاقوامی -