نامور ہندوستانی مصنف اور صحافی خشونت سنگھ چل بسے

نامور ہندوستانی مصنف اور صحافی خشونت سنگھ چل بسے

نئی دہلی(مانیٹرنگ ڈیسک) نامور ہندوستانی مصنف اور صحافی خشونت سنگھ ہندوستانی دارالحکومت دہلی میں انتقال کر گئے۔خشونت ایک عرصے سے بیمار تھے اور انتقال سے قبل انہیں سانس لینے میں شدید دشواری کا سامنا تھا۔ہندوستانی مصنف 2فروری 1915ءدریائے جہلم کے کنارے ہڈالی میں پیدا ہوئے، انہوں نے سینٹ اسٹیفنز کالج دہلی، گورنمنٹ کالج لاہور اور کنگز کالج لندن سے تعلیم حاصل کی۔معروف مصنف اور کئی کتابوں کے مصنف کو ان کی خدمات کے اعتراف میں پدما وبھوشن ایوارڈ سے بھی نوازا گیا تھا۔وہ ایک عرصہ ویکلی آف انڈیا اور بعدازاں نیشنل ہیرالڈ اور ہندوستان ٹائمز کے مدیر رہے۔سنگھ اندرا گاندھی کے دور میں راجیا سبھا میں نامزد کیے گئے جبکہ 1980 ءسے 1986ءتک وہ رکن پارلیمنٹ بھی رہے۔ 1974ءمیں ان کی پدما بھوشن ایوارڈ سے عزت افزائی کی گئی لیکن فوج کی جانب سے امرتسر کے گولڈن ٹیمپل پر چڑھائی کے باعث انہوں نے احتجاجاً اپنا ایوارڈ واپس کر دیا تھا۔ پھر 2007 ءمیں انہیں پدما وبھوشن ایوارڈ دیا گیا۔سنگھ کے جسم کو 4 بجے دہلی کے لودھی آڈیٹوریم میں جلایا جائے گا۔انہوں نے سوگواروں میں ایک بیٹا راہول اور بیٹی مالا کو چھوڑا ہے

مزید : صفحہ آخر