لڑکی سے زبردستی نکاح‘ چھاپہ مارنے والی پولیس ٹیم یرغمال

لڑکی سے زبردستی نکاح‘ چھاپہ مارنے والی پولیس ٹیم یرغمال
لڑکی سے زبردستی نکاح‘ چھاپہ مارنے والی پولیس ٹیم یرغمال

  


بہاولپور(ویب ڈیسک) لڑکی کا زبردستی نکاح کرنے کی اطلاع پر پولیس نے موضع جند شاہ میں چھاپہ مارا جہاں مسلح افراد نے اہلکاروں کو پکڑ کر تشدد کا نشانہ بنایا‘ وردیاں پھاڑ دیں اور رسیوں سے باندھ کر ایک کمرے میں بند کردیا‘ پولیس نے اطلاع دینے والے شخص سمیت تقریباً 150 افراد کیخلاف مقدمہ درج کر لیا۔ بتایا گیا ہے کہ اقبال انجم نے خیر پور ٹامیوالی تھانہ اطلاع دی کہ زرینہ مائی دختر اللہ ڈیوایا کا نکاح زبردستی اس کے کزن سے کرایا جا رہا ہے جس پر پولیس پارٹی نے چھاپہ مارا تو 35 مسلح افراد اللہ ڈیوایا‘ محمد نواز‘ حافظ اللہ بخش‘ محمد اقبال‘ محمد اجمل ‘ حق نواز وغیرہ ڈنڈوں و اسلحہ سمیت آگئے اور پولیس پارٹی پر حملہ کر دیا اور باندھ کر ایک کمرے میں بند کر دیا ملزمان عورتیں‘ مرد پہرا دیتے رہے۔ اے ایس آئی علی احمد اور اے ایس آئی محمد نواز شدید زخمی ہو گئے۔ مزید پولیس پارٹی کو آتا دیکھ کر ملزمان فرار ہو گئے۔

مزید : بہاول پور


loading...