یونائیٹڈٹیچرزکونسل کا مطالبات کے حق میں28مارچ احتجاج کااعلان

یونائیٹڈٹیچرزکونسل کا مطالبات کے حق میں28مارچ احتجاج کااعلان

  



لاہور( پ ر) پنجاب ٹیچرز یونین کے مرکزی صدر اللہ بخش قیصر نے کہا کہ حکومت پنجاب نے یکم فروری کو یونائیٹڈ ٹیچرز کونسل پنجاب کے قائدین طارق محمود، حافظ عبدالناصر ، حافظ غلام محی الدین ، محمد اشفاق ، رشید بھٹی ، اور دیگر اساتذہ رہنماؤں سے ایک طویل ملاقات میں کہا کہ اپ گریڈیشن ، پی ایس ٹی ، ای ایس ٹی اور ایس ایس ٹی کر دی جائے گی ، اور تعلیمی کنونش میں اس کا اعلان کیا جائے گا مگر مارچ کا دوسرا ہفتہ بھی گزر گیا ہے اور اپریل آنے والا ہے وعدہ وفا ہوتا ہوا نظر نہیں آرہا ۔ گورنمنٹ آف پنجاب صرف پی ٹی سی اساتذہ کو سکیل 12دے کر مطئمن کرنا سمجھ رہی ہے کہ اس وقت پرائمری ٹیچر ز میں پچاس فیصد تو پہلے ہی بارہ اور چودہ سکیل میں کام کر رہے ہیں ۔ ای ایس ٹی اور ایس ایس ٹی کو ہر طرح سے محروم رکھا جارہا ہے ۔

ایکسی لینس سکولوں میں اساتذہ کی بھرتی کا اشتہا ربھی دیا جاچکا ہے جن سکولوں کو ایکسی لینس کا درجہ دیا گیا ہے ان میں کام کرنے والے اساتذہ کو مسقتبل بھی مخدوش نظر آرہا ہے۔ حکومت پنجاب محکمہ تعلیم کی نجکاری پر عمل پیرا ہے جس کے خلاف یونائیٹڈ ٹیچرز سے تعلق رکھنے والے قائدین حکومت کے طاغوتی اور استحصالی نظام کے خلاف 28مارچ سے باقاعدہ احتجاج کیا جائے گا اور بعد ازاں ریلی نکالی جائے گی ۔ حکومت اپنی آمریت قائم کئے ہوئے ہے اور کرتی رہے گی مگر اساتذہ اس کا ڈٹ کر مقابلہ کریں گے ۔ نظام تعلیم کو بچانے کیلئے ہر قربانی دیں گے ۔ گورنمنٹ نظام تعلیم کو تجارتی منڈی کیوں بنا رہی ہے جبکہ دوسری طرف پنجاب بھر کے اساتذہ کو ذہنی طور پر ٹینشن دے کر نفسیاتی مریض بنادیا ہے ۔ اللہ تعالیٰ ان کو ہدایت دے اور اساتذہ کی تذلیل کرنے سے باز آجائیں ۔ اللہ بخش قیصر نے کہاہے کہ اب پنجاب کو جاگنا چاہئے اور ایک پلیٹ فارم پر کھڑے ہو کر حکومت کی ظالمانہ پالیسیوں کے خلاف اپنا کردار ادا کرنا چاہئے ۔

مزید : میٹروپولیٹن 4