لاہور فیڈربس سروسں کا افتتاح ، عا م آدمی کی زندگی بدلنے کیلئے دن رات کام کرتا رہوں گا : شہباز شریف

لاہور فیڈربس سروسں کا افتتاح ، عا م آدمی کی زندگی بدلنے کیلئے دن رات کام کرتا ...

  



 لاہور(جنرل رپورٹر) وزیراعلیٰ پنجاب محمد شہبازشریف نے ماڈل ٹاؤن میں لاہورفیڈربس سروس کا افتتاح کردیا ہے ۔ وزیراعلیٰ پنجاب محمد شہبازشریف نے فیڈر بس سروس کی افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے کہا کہ فیڈر بس سروس کے تحت200اےئرکنڈیشنز بسیں14فیڈرروٹس پر صبح6بجے سے رات 11بجے تک رواں دواں ہوں گی،یہ بسیں میٹروکے پورے روٹ پر130کلو میٹر تک کا علاقہ کورکریں گی اورروزانہ1لاکھ20ہزار مسافراس سروس سے مستفید ہوں گے۔ فیڈر بس سر وس ملحقہ علاقوں کے مکینوں کو میٹروبس سروس تک لانے اورلیجانے کے حوالے سے انتہائی سودمندثابت ہوگی اوراس جدید فیڈر بس سروس کا شہریوں کو بے پناہ فائدہ ہوگا۔وزیراعلیٰ نے راولپنڈی،اسلام آباداورملتان میٹروبس سروس کے روٹس پر بھی فیڈر بس سروس چلانے کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ میٹروبس سروس عوام کو دن رات شاندار ،محفوظ،تیزرفتار اورباکفایت سفری سہولیات فراہم کررہی ہے،فیڈر بس سروس اس میں ایک اورشاندار اضافہ ہے ۔فیڈر بس سروس پر سفر کرنے کے خواہاں مسافروں سے ایک طرفہ کرایہ 15روپے جبکہ فیڈر بس سروس کے بعد میٹروبس سروس پر سفر کرنے والے مسافروں سے 20روپے کرایہ وصول کیا جائے گا۔اس طرح میٹرواورفیڈر بس سروس کا کرایہ جڑا ہوا ہے۔انہوں نے کہا کہ عام آدمی کو بہترین سفری سہولتوں کی فراہمی کیلئے اربوں روپے کی سبسڈی سے اشرافیہ کے دل میں یہ سوال کانٹے کی طرح چھبے گااورانہیں تکلیف ہوگی کہ عام آدمی کو سہولتوں کی فراہمی کے منصوبوں پراربوں روپے کی سبسڈی کیوں دی جارہی ہے ۔ بڑی گاڑیوں پر اشرافیہ سفر کرے تو وہ ان کا حق ہے اوراگر غریب آدمی کی بات کی جائے تو ان کے دل پر نشتر چلتے ہیں۔ وسائل قوم کی امانت ہیں اورپنجاب حکومت یہ وسائل ایمانداری سے عوام کو تعلیم،صحت اورٹرانسپورٹ کی سہولتوں کی فراہمی پر خرچ کررہی ہے۔مرسڈیز ،پجارواورلمبی گاڑیوں میں سفر کرنے والوں کوعام آدمی کو بہترین اورآرام دہ سفری سہولتوں کی فراہمی پر تکلیف ہوتی ہے اوران کے پیٹ میں مروڑ اٹھتے ہیں اوروہ بلاجواز تنقید کرتے ہیں تاہم مجھے ان باتوں کی کوئی پروا نہیں۔وزیراعظم نوازشریف نے مجھے عوام کی خدمت کی جو ذمہ داری سونپی ہے میں اسے ہر حال میں نبھاؤں گااور عام آدمی کی زندگی بدلنے اور ان کے معیار زندگی میں بہتری لانے کیلئے جو کچھ کرنا پڑا کروں گاتاکہ انہیں بھی احساس ہوکہ وہ بھی پاکستانی ہیں۔اشرافیہ الٹی ہوجائے یا سیدھی مجھے عام آدمی کی خدمت سے نہیں روک سکتی اور میں عام آدمی کی زندگی بدلنے کیلئے دن رات کام کرتا رہوں گا۔حرام کمانے ،لوٹ مار اورقوم کی دولت ہڑپ کرکے محلات اورلمبی گاڑیاں خریدکر کڑے احتساب سے بچ نکلنے والوں کوعام آدمی کے فلاحی منصوبوں پر تنقید کا کوئی حق نہیں بلکہ حرام کی دولت ان سے چھین کر عام آدمی کے قدموں پرنچھاور کرنی چاہیے۔ہونا تو یہ چاہیے کہ ان کی لوٹی ہوئی دولت واپس لے کرغریب عوام کے فلاحی منصوبوں پر خرچ کی جانی چاہیے۔یہ حرام کی دولت ان سے چھین کرعام آدمی کوتعلیم ،صحت اورٹرانسپورٹ کی سہولتیں فراہم کرنے پر خرچ کرنی چاہیے۔انہوں نے کہا کہ23مارچ کی آمد آمد ہے اور اس تاریخی دن کو بڑے زورشور سے منایا جاتا ہے لیکن جس مقصد کے لئے علیحدہ وطن حاصل کیاگیاتھا وہ منزل ابھی بھی حاصل نہیں ہوئی۔قائداعظمؒ اورعلامہ اقبالؒ کے فرمودات و افکار پر عمل پیرا ہوکر ہی صحیح معنوں میں پاکستان کو اسلامی فلاحی ریاست بنایا جاسکتا ہے ۔ایک اور سوال کے جواب میں وزیراعلیٰ نے کہا کہ مجھ پر الزامات لگتے رہتے ہیں ،قانون اورانصاف کا نظام رائج کرنا ہے جس سے ظلم و زیادتی کا خاتمہ ہوگا اورانصاف کا بول بالا ہوگا۔ صوبائی وزراء،میاں مجتبیٰ شجاع الرحمن،زعیم حسین قادری،مشیر خواجہ احمد حسان،لارڈمےئر لاہورمبشر جاوید،ممبر قومی اسمبلی مہر اشتیاق احمد،معاون خصوصی ملک محمداحمد خان،چیف ایگزیکٹو آفیسر پنجاب ماس ٹرانزٹ اتھارٹی سبطین فضل حلیم ،ڈائیو کے چیف ایگزیکٹو آفیسر ،سیکرٹری ٹرانسپورٹ اور متعلقہ حکام اس موقع پر موجود تھے ۔دوسری طرفشہبازشریف نے لاہور رنگ روڈ سدرن لوپ کے منصوبے کا دورہ کیا اور منصوبے کے مختلف مقامات پر تعمیراتی کام کی رفتار کا جائزہ لیا۔ڈی جی ایف ڈبلیو او لیفٹیننٹ جنرل محمد افضل بھی وزیراعلیٰ کے ہمراہ تھے۔ وزیراعلیٰ نے منصوبے پر اعلیٰ معیار اور تیز رفتاری سے تعمیراتی کام کی تعریف کی اور ایف ڈبلیو او کے ڈائریکٹر جنرل لیفٹیننٹ جنرل محمد افضل اور ان کی ٹیم کی کارکردگی کو سراہا۔وزیراعلیٰ نے کماہاں سے گجومتہ اور گجومتہ سے رائے ونڈ انٹر چینج تک لاہور رنگ روڈ سدرن لوپ کے کئی کلومیٹر طویل منصوبے کا 2 گھنٹے تک دورہ کیا۔ رائے ونڈ انٹرچینج پر وزیراعلیٰ کو تعمیراتی کام کی سائٹ پر بھی منصوبے پر ہونے والی پیش رفت کے حوالے سے بریفنگ دی گئی۔ وزیراعلیٰ نے اس موقع پر کہا کہ لاہور رنگ روڈ سدرن لوپ کی22.4کلومیٹر طویل سڑک کے تعمیراتی کام کے اعلیٰ معیار اور رفتار کو دیکھ کر مجھے بہت خوشی ہوئی ہے۔وزیراعلیٰ نے سدرن لوپ پر کام کی رفتار اور معیار پر اپنے اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ مجھے اس اہم منصوبے پر اب تک ہونے والی پیش رفت دیکھ کر یقین ہو گیا ہے کہ سدرن لوپ کا پراجیکٹ مقررہ مدت میں ہر صورت مکمل ہوگا۔قبل ازیں وزیراعلیٰ محمد شہبازشریف ایف ڈبلیو او کے سائٹ آفس کماہاں پہنچے تو ڈائریکٹر جنرل ایف ڈبلیواو لیفٹیننٹ جنرل محمد افضل نے ان کا استقبال کیا۔ وزیراعلیٰ پنجاب اور ڈی جی ایف ڈبلیو او کے مابین ون ٹو ون ملاقات ہوئی جس میں لاہور رنگ روڈ سدرن لوپ پراجیکٹ اور دیگر منصوبوں پر پیش رفت پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ بعدازاں وزیراعلیٰ محمد شہبازشریف اور ڈی جی ایف ڈبلیواو لیفٹیننٹ جنرل محمد افضل کی زیرصدارت فرنٹیئر ورکس آرگنائزیشن (ایف ڈبلیو او) کے سائٹ آفس کماہاں میں اجلاس منعقد ہوا جس میں لاہو ر رنگ روڈ سدرن لوپ کے منصوبے پر اب تک ہونے والی پیش رفت اور مستقبل میں ٹائم لائن کے تحت اہداف کے حصول کے حوالے سے تفصیلی بریفنگ دی گئی۔ڈی جی ایف ڈبلیو او لیفٹیننٹ جنرل محمد افضل نے کہا کہ لاہور رنگ روڈ کے سدرن لوپ کے منصوبے کی تکمیل سے شہریوں کو سہولتیں ملیں گی اور وزیراعلیٰ شہبازشریف کی قیادت میں کمشنر لاہورڈویژن عبداللہ سنبل اور ان کی ٹیم نے منصوبے کو تیزی سے آگے بڑھانے کیلئے ہرممکن تعاون کیا ہے۔

مزید : صفحہ اول