”اف میرا خدا اتنا بڑا۔۔۔ “ انٹرنیٹ پر ایک ایسے پرندے کی ویڈیو جاری ہو گئی جس کا گوشت آپ روزانہ کھاتے ہیں، یہ کون سا جانور ہے اور کتنا بڑا ہے؟ آپ اندازہ بھی نہیں لگا سکتے، سوشل میڈیا پر نیا طوفان آ گیا

”اف میرا خدا اتنا بڑا۔۔۔ “ انٹرنیٹ پر ایک ایسے پرندے کی ویڈیو جاری ہو گئی جس ...
”اف میرا خدا اتنا بڑا۔۔۔ “ انٹرنیٹ پر ایک ایسے پرندے کی ویڈیو جاری ہو گئی جس کا گوشت آپ روزانہ کھاتے ہیں، یہ کون سا جانور ہے اور کتنا بڑا ہے؟ آپ اندازہ بھی نہیں لگا سکتے، سوشل میڈیا پر نیا طوفان آ گیا

  



لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) مرغی کا شمار پرندوں میں ہوتا ہے اور اس کا گوشت دنیا بھر میں انتہائی رغبت کے ساتھ کھایا جاتا ہے۔ پاکستان میں بھی اس کا استعمال بہت زیادہ ہوتا ہے لیکن کیا آپ نے کبھی ایک درمیانے سائز کے بکرے جتنی مرغی دیکھی ہے؟ نہیں! تو پھر آج دیکھ لیں کیونکہ اس مرغی نے اپنے سائز سے دنیا بھر میں تہلکہ مچا دیا ہے۔

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کیلئے یہاں کلک کریں

انٹرنیٹ پر جاری ہونے والی ویڈیو میں ایک کالی اور سفید رنگ کی مرغی اپنے ڈربے سے باہر منہ نکالتی ہے تو نارمل ہی لگتی ہے لیکن جب وہ پوری کی پوری باہر آتی ہے تو اس کا ”بھیانک“ سائز دیکھنے والے اپنی آنکھیں جھپکانا بھی بھول جاتے ہیں۔ اس ویڈیو کو دیکھنے والے تقریباً ہر شخص نے ہی اسے جعلی قرار دیا  لیکن پھر ایسی حقیقت سامنے آ گئی کہ سب اسے حقیقی ماننے پرمجبور ہوگئے لیکن اس کے باوجود بھی اس کا ’جثہ‘ ہضم کرنے میں ناکام ہیں اور اس قدر دلچسپ باتیں لکھیں کہ آپ بھی ہنسی سے لوٹ پوٹ ہو جائیں گے۔

سوشل میڈیا پر کئی گھنٹوں کی بحث و تکرار کے بعد بالآخر اس کے اصلی اور نقلی ہونے کا جواب بھی مل گیا اور لائیو سٹاک کنزروینسی فرم نے ایک فیس بک پوسٹ میں اس کی تصدیق کرتے ہوئے بتایا کہ ”اس ویڈیو میں نظر آنے والی مرغی برہما ثقافت کی نسل ہے۔ یہ نسل چین سے شنگھائی پورٹ کے ذریعے منگوائے گئے بہت بڑے پرندے کے ذریعے امریکہ میں تیار کی گئی۔“

ذرائع کے مطابق اس نسل کی مرغیاں 13 سے 14 پاﺅنڈ وزن تک پہنچ جاتی ہیں جبکہ اس نسل کے مرغوں کا وزن 17 سے 19 پاﺅنڈ تک ہوتا ہے۔

اس ویڈیو کے اصلی ہونے کی تصدیق کے بعد بھی بہت سے لوگوں کو یقین نہ آیا اور ایک شخص نے تو یہاں تک کہہ دیا کہ ''میں بس سونے ہی والا تھا کہ یاد آیا کہ میں بھی اسی زمین پر رہتا ہوں جہاں یہ بڑی والی مرغی رہتی ہے، اور اب میں ڈرا ہوا ہوں۔،،

مزید : ڈیلی بائیٹس


loading...