شاہ سلمان کا ایسا شاندار اعلان کہ غیرملکیوں کی خوشی کی انتہا نہ رہی

شاہ سلمان کا ایسا شاندار اعلان کہ غیرملکیوں کی خوشی کی انتہا نہ رہی
شاہ سلمان کا ایسا شاندار اعلان کہ غیرملکیوں کی خوشی کی انتہا نہ رہی

  



جدہ (محمد اکرم اسد) سعودی فرمانروا خادم حرمین شریفین شاہ سلمان بن عبدالعزیز کی طرف سے غیر ملکیوں، جو غیر قانونی طور پر مقیم ہیں، کو 3 ماہ کی مہلت دیتے ہوئے کہا کہ وہ بغیر کسی جرمانہ اور سزا کے اپنے معاملات درست کروالیں اور اپنے اپنے وطن بغیر کسی سزا اور جرمانہ کے روانہ ہوسکیں۔

سعودی عرب میں مقیم غیر ملکیوں اور خصوصاً غیر قانونی طور پر مقیم تارکین وطن میں خوشی کی ہر دوڑ گئی اور اسے سراہتے ہوئے خادم حرمین شریفین اور ان کی حکومت کا شکریہ اداکیا ہے اور کہا کہ ان کے اس انسانیت نواز فیصلے سے بہت سوں کا بھلا ہوگا اور وہ بغیر کسی تردد کے اپنے اپنے ملک روانہ ہوسکیں گے۔ طارق راجپوت نے بات کرتے ہوئے سعودی فرمانروا کے اس فیصلے کو سراہتے ہوئے کہا کہ ان کے دل میں ہمیشہ انسانیت کا درد رہتا ہے اور وہ ان کو دل سے چاہتے ہیں۔ اب سب غیر قانونی طور پر مقیم غیر ملکیوں کا فرض ہے کہ وہ جلد سے جلد اس مہلت کا فائدہ اٹھاتے ہوئے اپنے وطنوں کو روانہ ہوجائیں اور آئندہ احتیاط کریں۔

خالد چیمہ نے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ سعودی حکومت نے تین سال پہلے بھی غیر قانونی تارکین وطن کو چانس دیا تھا اور اب یہ سہولت غیر قانونی غیر ملکیوں کے لئے بہت بڑی ہے جس سے ان کو فی الفور فائدہ اٹھانا چاہیے تاکہ وقت ختم ہونے پر کسی مصیبت میں نہ پھنس جائیں اور آئندہ کبھی بھی غیر قانونی طور پر مقیم ہونے کی کوشش نہ کریں کیونکہ ملکی قوانین کا احترام کرنا لازم ہے۔ پاکستانی سفارتخانہ اور قونصلیٹ کو بھی مستعدی کا مظاہرہ کرتے ہوئے غیر قانونی طور پر مقیم افراد کے دستاویزات بنانے اور درست کرنے میں مکمل تعاون دینا چاہیے۔ سید مسرت خلیل نے خادم حرمین شریفین کے اس فیصلے کو بڑا فیصلہ قرار دیتے ہوئے کہا کہ سعودی حکومت نے ہمیشہ تارکین وطنوں کو سہولتیں دی ہیںا ور ان سہولتوں سے ان کو ناجائز فائدہ نہیں اٹھانا چاہیے اور اپنے کا غذات/ دستاویزات مکمل رکھنی چاہیے تاکہ کسی مصیبت کا شکار نہ ہوں۔ خادم حرمین شریفین کی اس سہولت سے غیر قانونی فوری طور پر فائدہ اٹھائیں اور ہوائی اڈوں کا رخ کریں تاکہ وہ بلا کسی جرمانہ یا سزا کے اپنے وطن روانہ ہوسکیں۔

مزید : عرب دنیا


loading...