تاجروں کو تحفظ فراہم کیا جائے ،شرافت علی مبارک

تاجروں کو تحفظ فراہم کیا جائے ،شرافت علی مبارک

چارسدہ (بیورو رپورٹ) تنظیم تاجراں کے صوبائی صدر شرافت علی مبارک نے وزیر اعلی پرویز خٹک اور آئی جی سے مطالبہ کیا ہے کہ چارسدہ کے تاجروں کو تحفظ فراہم نہ کیا گیا اور لوٹی ہوئی رقم برآمد نہ کی گئی تو پورے صوبے میں شٹر ڈاؤن ہڑتال کی جائیگی ۔ دہشت گردی کے جنگ میں فورسسز کے بعد تاجر برادری نے لازوال قربانیاں دی ہے مگر اب تاجرخود کو غیر محفوظ سمجھتے ہیں ۔ چارسدہ میں آئے روز ڈکیتی اور رہزنی کی وارداتیں صوبائی حکومت کے تبدیلی کے دعوؤں کی نفی کر تی ہے ۔ وہ چارسدہ میں متحدہ شاپ کیپرز فیڈریشن اور تاجر اتحاد کے مشترکہ اجلاس کے بعد ہنگامی پریس کانفرنس سے خطاب کر رہے تھے ۔ پریس کانفرنس سے خطاب کر تے ہوئے تنظیم تاجران خیبر پختونخوا کے صدر شرافت علی مبارک اور جنرل سیکرٹری شوکت علی نے کہاکہ تاجر رہنماء حکیم اللہ فوجی کے بیٹے سے دن دہاڑے 46لاکھ روپے چھیننے اور ملزمان کی عدم گرفتاری پر شدید تنقید کی اور کہا کہ صوبائی حکومت کے تبدیلی کے دعوے جھوٹ کا پلندہ ثابت ہو رہے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ چارسدہ میں گزشتہ تین ہفتوں کے دوران ڈکیتی اور رہزنی کے متعدد وارداتیں پولیس کے منہ پر طمانچہ ہے ۔ آئے روز دن دہاڑے ڈکیتی اور رہزنی کے وارداتوں سے ایسا لگ رہا ہے کہ محکمہ پولیس مکمل طور پر ناکام ہو چکی ہے ۔ انہوں نے واشگاف الفاظ میں کہا کہ حکیم اللہ فوجی کے بیٹے پر حملہ میں ملوث ملزمان کو جلد از جلد گرفتار نہ کیا گیا اور لوٹی ہوئی 46لاکھ روپے رقم برآمد نہ کی گئی تو پورے صوبے میں شٹر ڈاؤن ہڑتال کی جائیگی اور اس کا دائرہ کار دیگر صوبوں تک پھیلایا جائیگا۔ انہوں نے چارسدہ کے تاجر تنظیموں کو ہر قسم تعاون کی یقین دہانی کرائی اور کہا کہ تنظیم تاجراں خیبر پختونخوا احتجاجی تحریک میں دو قدم آگے رہے گی ۔انہوں نے کہاکہ د ہشت گردی کے جنگ میں فورسسز کے بعد تاجر برادری نے لازوال قربانیاں دی ہے مگر اب تاجرخود کو غیر محفوظ سمجھتے ہیں ۔ چارسدہ میں آئے روز ڈکیتی اور رہزنی کی وارداتیں صوبائی حکومت کے تبدیلی کے دعوؤں کی نفی کر تی ہے۔

مزید : پشاورصفحہ آخر

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...