شریفاں بی بی کیس میں پیش رفت کی رپورٹ عدالت عالیہ میں پیش

شریفاں بی بی کیس میں پیش رفت کی رپورٹ عدالت عالیہ میں پیش

پشاور(نیوزرپورٹر)ڈی آئی جی ڈیرہ اسماعیل خان نے ڈیرہ کی شریفاں بی بی کیس میں اب تک ہونے والی پیش رفت سے متعلق رپورٹ پشاورہائی کورٹ میں پیش کردی ہے اورفاضل بنچ نے مرکزی ملزم سجاول کی گرفتاری کے احکامات جاری کرتے ہوئے سماعت 26اپریل تک ملتوی کردی عدالت عالیہ کے جسٹس روح الامین خان اور جسٹس اکرام اللہ خان پرمشتمل دورکنی بنچ نے قاضی انورایڈوکیٹ کی وساطت سے شریفاں بی بی کوتحفظ فراہم کرنے کے لئے دائردرخواست کی سماعت کی اس موقع پرڈی آئی جی ڈیرہ اسماعیل خان کریم خان پیش ہوئے اورعدالتی استفسارپربتایا کہ ملزم سجاول کی گرفتاری کے لئے اقدامات اٹھائے جارہے ہیں انہوں نے عدالت ک بتایا کہ وزارت داخلہ کے ذریعے ملزم کانام ایگزٹ کنٹرول لسٹ پرڈال دیاگیاہے جبکہ اس کاقومی شناختی کارڈ بھی بلاک کردیاگیاہے اوراسی طرح ملزم کی ملکیتی 138کنال اراضی بھی قرق کردی گئی ہے جبکہ سجاول کی گرفتاری کے لئے اب تک 30چھاپے مارے جاچکے ہیں اورملزم کو پناہ دینے پرقریبی عزیزوں کے خلاف5مقدمات درج کئے جاچکے ہیں جبکہ لیہ میں ایک اعلی شخصیت کے ساتھ پناہ کی اطلاع پروہاں بھی چھاپہ ماراجاچکاہے جبکہ ملزم کااب تک پاسپورٹ بھی جاری نہیں ہوا جس سے اندازہ ہوتاہے کہ وہ بیرون ملک فرارنہیں ہوا جس پرفاضل بنچ نے پولیس کو مرکزی ملزم سجاول کی گرفتاری کے لئے ہدایات جاری کرتے ہوئے مزید سماعت 26 اپریل تک ملتوی کردی -

مزید : پشاورصفحہ آخر