لاہور میں کرونا مریضوں کیلئے 1000بستروں پر مشتمل فیلڈ ہسپتال بنانے کی منظوری

لاہور میں کرونا مریضوں کیلئے 1000بستروں پر مشتمل فیلڈ ہسپتال بنانے کی منظوری

  



لاہور(جنرل رپورٹر) وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدارنے کرونا وائرس کی روک تھام کیلئے ایکسپوسینٹر لاہور میں ایک ہزار بستروں پر مشتمل فیلڈ ہسپتال کے قیام کی منظوری دیتے ہوئے فوری اقدامات کی ہدایت کردی۔وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے محکمہ صحت اورپی ڈی ایم اے کیلئے تقریباً8ارب روپے کے فنڈزکابھی اعلان کیا،جس پر محکمہ خزانہ نے8ارب روپے کے فنڈز کا اجراء کردیا۔تفصیلات کے مطابق وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدارکے زیر صدارت گزشتہ روز کرونا وائرس سے نمٹنے سے متعلق قائم کابینہ کمیٹی کااہم اجلاس منعقد ہوا،جس میں کرونا وائرس کی روک تھام کیلئے کئے جانے والے اقدامات کا تفصیلی جائزہ لینے کیساتھ ساتھ ایران میں موجود زائرین کو ایئر لفٹ کرنے کی تجویز پر غور کیا گیا۔اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے کہاہے کہ بلوچستان حکومت سے تعاون اورتفتان میں قرنطینہ مرکز کے قیام کا جائزہ لینے کے حوالے سے وزارتی کمیٹی تشکیل دی گئی ہے اور بلوچستان حکومت کی ہر ممکن مدد کریں گے اورپنجاب حکومت بلوچستان کی حکومت کیلئے ایک ارب روپے فوری طو رپر فراہم کرے گی۔ وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے ڈاکٹروں اورہیلتھ پروفیشنلز کے مسائل کے حل کیلئے بھی کمیٹی بنا دی ہے۔وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے کہاکہ کوروناوائرس کے مریضوں کی دیکھ بھال کرنیوالے ڈاکٹرز ہمارے ہیروہیں لہٰذاڈاکٹروں کی حوصلہ افزائی ضروری ہے۔ وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے ڈیلی ویجز ملازمین کے معاشی مسائل حل کرنے کا اعلان کرتے ہوئے کہاکہ ڈیلی ویجز ملازمین کوتنخواہوں کی ادائیگی جاری رکھی جائیگی۔مشکل حالات میں ڈیلی ویجز ملازمین کو تنہا نہیں چھوڑیں گے۔وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے چیف منسٹر فنڈ کے قیام کا اعلان کرتے ہوئے کہاکہ چیف منسٹر فنڈمیں مخیرحضرات دل کھول کر عطیات دیں۔انہوں نے کہا کہ مخیر حضرات کی پائی پائی کرونا وائرس کی روک تھام کیلئے کیے جانے والے اقدامات پر خرچ کی جائے گی۔وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے کہا کہ لاہور کے 8ہوٹلوں میں 880بیڈز کی نشاندہی کرلی گئی ہے، ضرورت پڑنے پر انہیں استعمال کیا جاسکے گا۔وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے کہاکہ عوام کوریلیف دینے کیلئے مزید اقدامات کے حوالے سے وفاقی حکومت سے بات چیت کرینگے۔انہوں نے کہا کہ تفتان سے آنے والے زائرین کو پنجاب میں قائم قرنطینہ سینٹرز میں ہر طرح کی سہولت فراہم کی جائے گی۔ انہوں نے کہا کہ 1250زائرین ملتان کے لیبر کمپلیکس میں قائم قرنطینہ مرکز میں پہنچ چکے ہیں۔گجرات،فیصل آباد اور ٹیکسلا میں بھی قرنطینہ مرکز قائم کیے جارہے ہیں۔نجی ہسپتالوں میں کرونا وائرس کے مریضوں کے علاج معالجے کیلئے خصوصی فلورمختص کیے جائیں گے۔وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے ہسپتالوں میں ماسک اوردیگر ضروری سامان فی الفورمہیا کرنے کی ہدایت کی۔انہوں نے کہاکہ گھروں میں آئسولیشن کے حوالے سے ایس او پیز مرتب کرلی گئی ہیں او راس حوالے سے وفاقی حکومت کی مشاورت سے مشترکہ میکنزم مرتب کیا جائیگا۔وزیراعلیٰ عثمان بزدارنے ریٹائرڈ ڈاکٹروں اوردیگر سٹاف کو واک ان انٹرویو کے ذریعے بھرتی کرنے کی منظوری دیتے ہوئے کہا کہ پنجاب حکومت کرونا وائرس کے مریضوں کے علاج معالجے کیلئے ہنگامی بنیادوں پر ڈاکٹراور پیرا میڈیکل سٹاف بھرتی کرے گی۔انہوں نے کہاکہ اشیائے خوردونوش کی سپلائی میں کوئی کمی نہیں آنی چاہیے۔علاوہ ازیں وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار نے کرونا وائرس کی روک تھا م کیلئے اقدامات کا جائزہ لینے کیلئے سیاسی ٹیم کو بھی میدا ن میں اتار دیا۔ وزیراعلی عثمان بزدار کی ہدایت پر صوبائی وزراء، مشیران اور معاونین خصوصی کومختلف شہروں میں صورتحال کا جائزہ لینے کیلئے ذمہ داریاں تفویض کر دی گئیں۔صوبائی وزرا،مشیران اورمعاونین خصوصی اپنے تفویض کردہ اضلاع کے دورے کریں گے۔ صوبائی وزراء،مشیران اور معاونین خصوصی انتظامیہ کے ساتھ مل کرکورونا وائرس کی روک تھام کیلئے اقدامات کی نگرانی کریں گے۔ وزیراعلیٰ عثمان بزدارنے صوبائی وزراء، مشیران اور معاونین خصوصی کو فی الفور اپنے اپنے ضلع کادورہ کرنے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا کہ کابینہ اراکین روزانہ کی بنیاد پر کرونا وائرس سے پیدا ہونیوالی صورتحال بارے ضلعی انتظامیہ، محکمہ صحت اور متعلقہ محکموں کیساتھ مل کراقدامات کا جائزہ لیکر رپورٹ وزیر اعلیٰ آفس پیش کریں۔بعدازاں میدیا کو بریفنگ دیتے ہوئے وزیر اعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدارنے کہاہے کہ پنجاب میں کرونا وائرس کے 96کیسوں کی تصدیق ہوئی ہے جن میں 76 ایران سے آنے والے زائرین ہیں جبکہ15کیس لاہور،3گجرات، ایک جہلم اورایک راولپنڈی کاہے۔انہوں نے کہا کہ تفتان سے تقریبا ً1250 زائرین ملتان آ چکے ہیں جن کی دیکھ بھال کی جا رہی ہے۔انہوں نے بتایاکہ پنجاب حکومت24گھنٹے میں 10ہزار بستروں پر مشتمل قرنطینہ مرکز قائم کرنے کی استعداد رکھتی ہے او راس حوالے سے ہماری تیاریاں مکمل ہیں۔انہوں نے کہاکہ پنجاب حکومت نے محکمہ صحت کو 236ملین روپے کے جوفنڈز جاری کئے تھے وہ خرچ ہو چکے ہیں او رمحکمہ صحت کا اشیاء و ضروری ساز وسامان کی خریداری کا اپنا میکنزم ہے، کچھ سامان سنٹر ل پرچیز ہوتا ہے او رکچھ صوبائی سطح پر۔انہوں نے بتایا کہ کرونا کے حوالے سے قائم کابینہ کمیٹی کے آئندہ اجلاس ہفتے کو ویڈیولنک کے ذریعے ہوگا۔ایک سوال کے جواب میں وزیراعلیٰ نے کہاکہ ہر کسی کو ماسک پہننے کی ضرورت نہیں،”بعض سیاستدان اس قومی مسئلے کے باوجود تنقید کررہے ہیں“ کے حوالے سے پوچھے گئے سوال کے جواب میں وزیراعلیٰ نے کہاکہ ایسے لوگوں کیلئے میں دعا ہی کر سکتا ہوں۔

سردار عثمان بزدار

مزید : صفحہ اول