پنجاب حکومت کا رواں سال میں منسٹر بلاک کوفعال کرنیکا فیصلہ

پنجاب حکومت کا رواں سال میں منسٹر بلاک کوفعال کرنیکا فیصلہ

لاہور(محمد نواز سنگرا)پنجاب حکومت کا رواں مالی سال میں منسٹر بلاک کوفعال کرنے کا فیصلہ،الیکٹرونکس کی اشیاء خریدنے کیلئے یو ای ٹی اور ٹیوٹا کے افسران کی خدمات حاصل کر لیں۔منسٹر بلاک فعالی کیلئے بنائی گئی کمیٹی کے سربراہ سیکرٹری آئی اینڈ سی ہونگے ،بلاک کیلئے فرنیچر،الیکٹرانکس ، ایل سی ڈیز اور دیگر ضروری سامان کی خریداری کی جائے گی۔منسٹر بلاک بنانے کا منصوبہ سابق وزیر اعلیٰ پنجاب چوہدری پرویز الہیٰ نے دس سال قبل بنایا تھا۔موجودہ حکومت نے کئی بار فروخت کرنے کی کوشش کی جو کہ مناسب دام نہ ملنے کیوجہ سے پایہ تکمیل کو نہ پہنچ سکا،بیرون ممالک سے آنے والے وی وی آئی پیز کی رہائش کیلئے استعمال کرنے کا منصوبہ بھی مکمل نہ ہو سکا تو اب بالآخر پنجاب حکومت نے اسے بحال کر کے صوبائی وزراء کے دفاتر بنانے کا فیصلہ کیا ہے جو کہ30جون2015سے قبل مکمل کر لیا جائے گا اور آئندہ سال صوبائی وزراء کو شفٹ کر دیا جائے گا اور پنجاب کے تمام صوبائی وزراء ایک ہی بلڈنگ میں قیام پذیر ہونگے جس سے سائلین کی مشکلات بھی کم ہونگی۔پنجاب حکومت نے سیکرٹری آئی اینڈ سی کی سربراہی میں کمیٹی تشکیل د ی ہے جو منسٹر بلاک کو قابل استعمال بنانے کیلئے تمام تر ضروری سامان کی خریداری کریں گے۔منسٹر بلاک میں تمام دفاتر کیلئے کرسیاں ،میز،ایل سی ڈیز، ٹیلی فون اور دیگر ضروری سامان کی خریداری رواں سال کے بجٹ سے کی جائے گی اور منسٹر بلاک جو کہ سول سیکرٹریٹ اور سیشن کورٹ کے درمیان بنایا گیا ہے اس کو مکمل طور پر فعال بنایا جائے گا۔

مزید : صفحہ آخر