پاکستان زندہ باد کا نعرہ لگانے والوں پر مقدمات بلا جواز ہیں:فاروق ستار

پاکستان زندہ باد کا نعرہ لگانے والوں پر مقدمات بلا جواز ہیں:فاروق ستار

  

کراچی (اسٹاف رپورٹر)ایم کیو ایم پاکستان کے سربراہ ڈاکٹرفاروق ستار نے کہا ہے کہ 22 اگست کو پاکستان کے خلاف نعرے لگانے والوں کے ساتھ ہمیں شامل نہیں کیا جائے۔ پاکستان زندہ باد کہنے والوں پر مقدمات کے اندراج کا کوئی جواز نہیں ہے ۔ ہمیں اس مقدمے میں زبردستی گھسیٹا گیا، اس کیس کو واپس لینا چاہیے۔عوامی ریلی کو ریلا بناکر ثابت کریں گے کہ حیدرآباد آج بھی ایم کیو ایم کا قلعہ ہے ۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے ہفتہ کو پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔انہوں نے کہا کہ رؤف صدیقی کی نئی کتاب پڑھ لی جائے تو جے آئی ٹی کا فیصلہ کرنے میں آسانی ہوجائے گی۔پاکستا ن میں اگر گھر میں بھی جھگڑا بھی ہوجائے تو جے آئی ٹی بنانے کا کہا جاتا ہے۔انہوں نے کہا کہ پاکستان زندہ باد کہنے والوں پر مقدمات کے اندراج کا کوئی جواز نہیں ہے ۔ ہمیں اس مقدمے میں زبردستی گھسیٹا گیا، اس کیس کو واپس لینا چاہیے۔ریاست اور حکومت سے کہا ہے کہ جن لوگوں نے پاکستان زندہ باد کہنے والوں پر مقدمہ نہیں بنتا۔ 22 اگست کو پاکستان کے خلاف نعرے لگانے والوں کے ساتھ ہمیں شامل نہیں کیا جائے۔ آج بھی بلاجواز چھاپے اور گرفتاریاں جاری ہیں، چوہدری نثار تنگ نظری کا مظاہرہ کررہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ عوام ریلی کو ریلا بناکر ثابت کردیں کہ حیدرآباد آج بھی ایم کیو ایم کاقلعہ ہے۔90 کی دھائی کے آخر میں حیدرآباد میں قتل عام کی تحقیقات کے لیے جوڈیشل کمیشن بننا چاہیے۔آئی جی اے ڈی خواجہ اچھے افسر ہیں امید ہے کہ وہ ازسرنو اور شفاف تحقیقات کریں گے۔اس موقع پر بیرسٹر فروغ نسیم نے کہا کہایم کیو ایم نے ثابت کردیا کہ وہ غریبوں کی جماعت ہے۔ رؤف صدیقی جب الیکشن لڑرہے تھے تو ان پر بم حملہ بھی کیا گیا۔دھاندلی کے ثبوت محمود آباد کے غریب عوام نے ہمیں دیے تھے۔ رؤف صدیقی کو ہرانے کے لیے سب نے ایڑی چوٹی کا زور لگایا مگر سب ناکام ہوئے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -