ماہ رمضان میں رزق کی ترقی کا وہ عمل جس کے لئے کسی اور وظیفہ کی ضرورت نہیں پڑے گی

ماہ رمضان میں رزق کی ترقی کا وہ عمل جس کے لئے کسی اور وظیفہ کی ضرورت نہیں پڑے ...
ماہ رمضان میں رزق کی ترقی کا وہ عمل جس کے لئے کسی اور وظیفہ کی ضرورت نہیں پڑے گی

  

رزق کی تمناکرنا انسان کی خواہشات میں شامل ہے ۔اکثر لوگ رزق میں اضافے کے عاملین سے رہ نمائی لیتے ہیں یا کتابوں رسا لوں سے ایسے وظائف تلاش کرکے پڑھتے ہیں۔ایسے حضرات کے لئے ماہ رمضان انتہائی اہم مہینہ ثابت ہوسکتا ہے ۔اس ماہ میں چاہئے کہ وہ اللہ سے دعائیں کریں ،عبادات کریں اور ماہ رمضان میں قرآن مجید کی تلاوت اورشعار بنا لیں۔ 

حضرت ابن عباسؓ سے روایت ہے کہ رسول اللہ ﷺ نے فرمایا کہ ماہ رمضان کا ہر روزہ اپنی جگہ فضیلت رکھتا ہے ، لیکن ہر دن کی مخصوص دعا پڑھنے سے اسکی عظمت دو چند ہوجاتی ہے۔آنحضرت ﷺ نے رمضان مبارک کے دنوں میں پڑھی جانے والی دعاؤں کی فضیلت بھی بیان فرمائی ہے۔ 

ماہ رمضان میں دعا کی مدد سے رزق تو بڑھتا ہی ہے ،یہ مہینہ ویسے بھی اللہ کا مہینہ ہے جس میں اللہ بندوں کا رزق بڑھا دیتا ہے ۔ ایک بار ایک شخص رسول خداﷺ کی خدمت میں حاضر ہوا اور عرض کیا ’’ یا نبی اللہﷺ میں چاہتا ہوں میرا رزق بڑھ جائے ‘‘ اللہ کے پیارے رسولﷺ نے فرمایا ’’ باوضو رہا کر تیرا رزق بڑھ جائے گا‘‘ اللہ کے نبی ﷺ کے اس فرمان کی روشنی میں ہر مسلمان کو باوضو رہنا چاہئے تاکہ اس پر اللہ کی رحمتیں نازل ہوتی رہیں ۔ 

پیر ابو نعمان رضوی سیفی فی سبیل للہ روحانی رہ نمائی کرتے اور دینی علوم کی تدریس کرتے ہیں ۔ان سے اس ای میل پررابطہ کیا جاسکتا ہے۔peerabunauman@gmail.com 

مزید : روشن کرنیں