وزیر اعظم اور وزیر اعلیٰ کیخلاف منی لانڈرنگ کیس کی سماعت ، پولیس نے فاضل جج کو ہی عدالت میں داخل ہونے سے روک دیا

وزیر اعظم اور وزیر اعلیٰ کیخلاف منی لانڈرنگ کیس کی سماعت ، پولیس نے فاضل جج ...
وزیر اعظم اور وزیر اعلیٰ کیخلاف منی لانڈرنگ کیس کی سماعت ، پولیس نے فاضل جج کو ہی عدالت میں داخل ہونے سے روک دیا

  

لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن )لاہور کی سپیشل عدالت میں وزیر اعظم شہباز شریف اور وزیر اعلیٰ حمزہ شہباز پر 16ارب روپےکے منی لانڈرنگ کیس کی سماعت کے دوران پولیس نے جج کی گاڑی کو روک لیاجس پر عدالت نے ایس پی سول لائنز کو طلب کر لیا ہے۔

نجی ٹی وی "جیو نیوز" کے مطابق ایس پی سول لائنز عدالت میں پیش ہوئے ان کا کہنا تھا کہ یقین دہانی کرانا چاہتا ہوں کہ آئندہ ایسا نہیں ہو گا جس پر جج نے کہا کہ آئندہ کی بات نہیں کر رہے آج کی بات کریں ،آج جس نے یہ سب خراب کیا اس کیخلاف کارروائی کر کے بتائیں ، میں اس پر باقائدہ حکم جاری کروں گا۔

عدالت نے استفسار کیا کہ کیا سیکیورٹی کا یہ مطلب ہے کہ آپ کام میں رکاوٹ ڈالیں؟

 واضح رہے کہ عدالت میں سماعت سے قبل سیکیورٹی پر مامور پولیس اہلکاروں نے سپیشل کورٹ کے فاضل جج کی گاڑی کو بھی روک دیا تھا اور انہیں عدالت داخل نہیں ہونے دیا گیاتھا، جس پر عدالت نے ڈی ایس پی اور ایس ایچ او کو عدالت میں طلب کیا تھا لیکن عدالتی عملے کے احکامات پہنچانے کے باوجود پولیس اہلکار عدالت میں نہیں آئے تھے ،جس پر عدالت نے ریمارکس دیئے تھے کہ کیا یہ عدالتوں کا احترام ہے کہ پولیس اہلکار عدالت کے احکامات نہٰیں مان رہے ۔

مزید :

اہم خبریں -قومی -