لاہور میں غیر اعلانیہ لوڈ شیڈنگ، واسا کےٹیوب ویل خراب ، شہری دہرے عذاب میں مبتلا ، 836 آبادیوں کو پانی کی شدید قلت کا سامنا

لاہور میں غیر اعلانیہ لوڈ شیڈنگ، واسا کےٹیوب ویل خراب ، شہری دہرے عذاب میں ...
لاہور میں غیر اعلانیہ لوڈ شیڈنگ، واسا کےٹیوب ویل خراب ، شہری دہرے عذاب میں مبتلا ، 836 آبادیوں کو پانی کی شدید قلت کا سامنا

  

لاہور( جاوید اقبال /جنرل رپورٹر )بجلی کی غیر اعلانیہ شدید لوڈ شیڈنگ اور واسا کے50 ناکارہ ٹیوب ویل شہر میں پانی کا بحران پیدا کرنے کا باعث بن گئے ہیں .بتایا گیا ہے کہ شہر کی 836 آبادیوں میں پانی کی شدید قلت کا سامنا ہے اس کی بنیادی وجہ بجلی کی شدید لوڈشیڈنگ اور ان علاقوں کو پانی سپلائی کرنے کے لیے لگائے گئے واسا کے ٹیوب ویلوں کی تعداد 50 ہے اور یہ ناکارہ ہو چکے ہیں ان میں سے 26 ٹیوب ویل کو آئندہ مالی سال میں مکمل طور پر ناکارہ کرکے ان کی جگہ نئے ٹیوبل لگانے کے لیے رواں مالی سال کے سالانہ ڈویلپمنٹ پروگرام میں رکھا گیا ہے مگر واسا کے پاس فنڈز نہ  ہونے کی وجہ سے ان کی ریپلیسمنٹ نہیں ہوسکی آخرکار ان میں سے  اکثر ٹیوب ویل پانی کی جگہ ہوا دیتے ہیں اور نتیجہ یہ کہ پانی کی کمی کا باعث بن رہے ہیں رہی سہی کسر  بجلی کی غیر اعلانیہ لوڈ شیڈنگ نے پوری کر دی ہے یہ ٹیوب جوڑے پول رحمان پورہ ہرا اندرون شہر مصری شاہ سمن آباد کینچی مہر  فیاض کالونی فتح گڑھ  مغلپورہ گڑھی شو حبیب گنج بلال گنج کیا میرا کوٹ خواجہ سعید کوٹ شہاب دین  شاپور ڈھولنوال شالامار ٹاؤن  مصطفی آباد جیسے علاقوں کو پانی سپلائی کرتے ہیں ایک تو ان کی پانی دینے کی مدت معیاد ختم ہو چکی ہے دوسری طرف بجلی کی شدید لوڈ شیڈنگ نے شہریوں سے مطلوبہ مقدار کے مطابق پانی حاصل کرنے کا حق چھین لیا ہے یہی وجہ ہے کہ شہر میں پانی پانی کی پکار ہے اور لوگ پانی کی تلاش میں مارے مارے پھرتے ہیں اوپر سے شہر میں لوگوں کو بیٹھے اور معیاری پانی کی فراہمی کے لیے لگائے گئے 300سے زائد فلٹریشن پلانٹ میں سے3 درجن کے قریب ایسے پلانٹ ہے جو پانی کم دے رہے ہیں اور اکثر میں سے ایک پانی کی ٹوٹی غائب ہوچکی ہے سے لوگوں کو ان فلٹر پلانٹس  پر بھی مطلوبہ مقدار میں پانی  میسر نہیں آ رہا نیو اوراولڈمزنگ اور اس سے ملحقہ آبادیوں  میں بھی پانی کی شدید قلت ہے اور بعض گھروں میں زنگ آلود پانی آتا ہے سنت نگر آوٹ فال روڈ عثمان گنج بلال گنج اسلام پورہ کی بعض بستیوں میں بھی پانی کی قلت کا سامنا ہے اور ان میں سے بعض آبادیوں میں آلودہ پانی گھروں میں آ رہا ہے جس نے لوگوں کی زندگی اجیرن بنا رکھی ہے اس حوالے سے واسا کے منیجنگ ڈائریکٹر  انجینئر ڈاکٹر محمد تنویر سے بات کی گئی تو انہوں نے کہا کہ اس سال 26 ٹیبل تبدیل کئے جائیں گے ان کو اے ڈی پی میں رکھا گیا ہے پانی کی قلت کی سب سے بڑی وجہ یہ ہے کہ بجلی کی غیر اعلانیہ شدید لوڈ شیڈنگ کا سامنا ہے کوشش کرتے ہیں کہ شہریوں کو ان کی ضروریات کے مطابق پانی فراہم کریں کئی گھنٹے ٹیبل نہیں چلتے نلو میں پانی کا پریشر کم ہونے کی وجہ سے لوگوں کو پانی نہیں ملتا انہوں نے کہا کہ وزیر اعلی پنجاب کی ہدایت پر چلانے کا دورانیہ بڑھا دیا گیا ہے لوڈشیڈنگ  کے باوجود ملتان راولپنڈی کراچی کوئٹہ سے زیادہ پانی لاہور کے شہریوں کو فراہم کر رہے ہیں.

مزید :

علاقائی -پنجاب -لاہور -