بھوک اور غذائی قلت کے خاتمے کے اقدامات کئے جائیں، بان کی مون

بھوک اور غذائی قلت کے خاتمے کے اقدامات کئے جائیں، بان کی مون

روم(ثناء نیوز)اٹلی میں خوراک کے موضوع پر بین الاقوامی اجلاس جاری ہے ۔خوراک کے بین الاقوامی اجلاس میں دنیا بھر میں بھوک کے خاتمے کے لیے ایک منصوبہ بنانے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔اٹلی میں ہونے والے اس اجلاس کے پہلے روز روم اعلامیے کے نام سے جاری ہونے والے دستاویز میں ایک مرتبہ پھر واضح کیا گیا ہے کہ محفوظ، غذائیت سے بھرپور اور خوراک کی معقول مقدار ہر ایک کا بنیادی حق ہے۔ مزید یہ کہ دنیا بھر میں اس وقت 805 ملین افراد بھوک کا شکار ہیں۔اس دستاویز کی اجلاس میں شریک 170 ممالک کے نمائندوں نے دلی تائید کے ساتھ منظوری دی۔ اس موقع پر متعدد حکومتوں نے کہا کہ وہ انفرادی سطح پر بھی بھوک کے خاتمے اور موٹاپے کے خلاف اقدامات کریں گے۔

اس دوران اقوام متحدہ کے سکیرٹری جنرل بان کی مون نے اپنے ایک ویڈیو پیغام میں مطالبہ کیا کہ بھوک اور غذائی قلت کے خاتمے کے لیے ملکوں کو اپنی کوششوں کو دوگنا کر دینا چاہیے۔

مزید : عالمی منظر