پانامہ بل کی منظوری کے بغیر شریف برادران کا احتساب ممکن نہیں ،بلاول ،جلا وطن نہیں ، جلد پاکستان آؤں گا، آصف زرداری

پانامہ بل کی منظوری کے بغیر شریف برادران کا احتساب ممکن نہیں ،بلاول ،جلا وطن ...

  



 لندن (آن لائن) سابق صدر آصف علی زرداری نے کہا ہے کہ جلا وطن نہیں ،چند ہفتوں میں پاکستانی عوام میں ہوں گا۔ نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے سابق صدر نے کہا کہ جلد پاکستان آ جاؤں گا۔ انہوں نے کہاکہ سب کو ساتھ لے کر چلنے کے فلسفے پر قائم ہیں۔عمران خان اعتزاز احسن کی تعریف اور آپ پر تنقید کرتے ہیں کے سوال پر آصف زرداری نے کہا کہ انوکھا لاڈلا کھیلن کو مانگے چاندنی ، چاندنی کا مطلب ہے ’’پرائم منسٹر شپ‘‘۔ انہوں نے کہا کہ عمران خان جب سیاست دان بن جائیں گے تو ان سے بھی بات کر لیں گے ۔ ان کا کہنا تھاکہ پیپلز پارٹی ہی عوام کی پارٹی اور خدمت گار جماعت ہے۔

زرداری

لاہور،کراچی ( نمائندہ خصوصی،آئی این پی،آن لائن)چےئرمین پیپلز پارٹی بلاول بھٹو زر دار ی نے ایک بار پھر یہ واضح کیا ہے کہ ہم پانامہ لیکس کے ایشو پر جمہوری طریقے سے احتساب چاہتے ہیں حکومت کی سفارتی محاذ پر ناکامی پر وزارت خارجہ اور نیشنل ایکشن پلان کی ناکامی پر چوہدری نثا ر کا بھی احتساب چاہتے ہیں ‘ لائن آف کنٹرول پر ہمارے بچے شہید ہورہے ہیں لیکن وزیراعظم نواز شریف اس حوالے سے کچھ بھی نہیں کررہے ہیں ۔ ان خیالات کااظہار انہوں نے داتا داتار پر اچانک حاضری اور فاتحہ خوانی کے بعد میڈیا سے گفتگوکرتے ہوئے کیا ۔ بلاول بھٹو زرداری نے مزار پر پھولوں کی چادر چڑھائی اور ملک و قوم کی سلامتی کے لئے بھی خصوصی دعا کی ۔ بلاول بھٹو زرداری کا مزید کہنا تھا کہ ہم نے حکومت کو اپنے چار مطالبات پیش کئے ہیں لیکن ابھی تک حکومت نے ہمارا کو ئی بھی مطالبہ پورا نہیں کیا اگر 27دسمبر تک ہمارے مطالبات پورے نہ ہوئے تو اعلان کے مطابق بھرپور تحریک چلائیں گے ۔ انہوں نے نیشنل ایکشن پلان پر عملدآمد کے حوالے سے کہاکہ ہم چاہتے ہیں کہ اس کی ناکامی پر چوہدری نثا ر کا بھی احتساب ہو جبکہ سفارتی محاذپر ہونے والی ناکامی پر وزارت خارجہ کا بھی احتساب ہونا چاہیے ۔ انہوں نے کہا کہ ہم پانامہ لیکس پر جمہوری طریقے سے احتساب چاہتے ہیں اس کے لئے ہمارے پیش کردہ بل کو منظور کیا جائے ۔ پانامہ بل کے پاس ہونے تک شریف خاندان کا احتساب ممکن نہیں ہے اور نواز شریف کے احتساب کیلئے ہمارا بل پاس ہونا ضروری ہے ۔ 27 دسمبر تک اگر ہمارے چار مطالبات نہ مانے گئے تو دمادم مست قلندر ہو گا۔ انہوں نے کہاکہ پنجاب میں پارٹی کی سیاسی سرگرمیاں بڑھائیں گے ۔ا نہوں نے چیئرمین تحریک انصاف عمران خان کے بارے میں کئے گئے سوال کے جواب میں کہا کہ چاچا عمران خان کیلئے میری بس دعاہے ۔ دوسری طرف بلاول بھٹو نے 30نومبر کو پارٹی کا یوم تاسیس اور 5روزہ پارٹی کنونشن لاہور میں کر نے کا اعلان کردیا ۔مرکزی کنونشن میں چاروں صوبوں سے پارٹی عہدیداران، رہنما اور کارکن شریک ہوں گے ۔پیپلزپارٹی کے ذرائع کے مطابق بلاول بھٹو زرداری نے پنجاب میں اپنا قیام بڑھانے کا فیصلہ کیا ہے‘ بلاول ہاؤس لاہور میں پارٹی کنونشنز کا سلسلہ 5 روز تک جار ی رہے گا30 نومبر کو پیپلزپارٹی کے یوم تاسیس کی مرکزی تقریب بلاول ہاؤس میں ہوگی اور مرکزی کنونشن میں چاروں صوبوں سے پارٹی عہدیداران، رہنما اور کارکن شریک ہوں گے جب کہ اس موقع پر پنجاب، خیبر پختونخوا اور بلوچستان کے ضلعی عہدیداروں کے انٹرویوز بھی لئے جائیں گے۔

مزید : صفحہ اول