شریف برادران3بار حکومت میں آئے ، عوام کو کیا ملا؟پرویز الٰہی

شریف برادران3بار حکومت میں آئے ، عوام کو کیا ملا؟پرویز الٰہی

لاہور (نمائندہ خصوصی) مسلم لیگ ق کے صدر پرویز الٰہی نے کہا ہے کہ پانامہ کیس سپریم کورٹ میں ہے اس پر بات کرنا مناسب نہیں، عدالت جو فیصلہ کرے گی سب کو قابل قبول ہو گا۔ تفصیلات کے مطابق اتوار کے روز لاہور میں مرحوم پی پی رہنما جہانگیر بدر کے اہل خانہ سے تعزیت کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے مسلم لیگ ق کے صدر پرویز الٰہی نے کہا کہ جہانگیر بدر منجھے ہوئے سیاستدان تھے اور ان کے سب سیاسی جماعتوں سے رابطے تھے۔ انہوں نے مرحوم کے بلند درجات اور لواحقین کے لئے صبر جمیل کی دعا بھی کی۔ پانامہ لیکس کیس پر صحافیوں کے سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ پانامہ معاملہ عدالت میں ہے۔ اس پر بات کرنا مناسب نہیں۔ امید ہے کہ عدالت جو فیصلہ کرے گی سب کو قابل قبول ہو گا۔ انہوں نے مزید کہا کہ حکومت کے خلاف سب اپوزیشن جماعتوں کو متحد ہونا چاہیئے۔ ہماری کوشش ہے کہ سب اپوزیشن جماعتیں متحد ہو جائیں۔ جب سب اپوزیشن جماعتوں کا مقصد ایک ہے تو سب کو اکٹھا بھی ہونا چاہیئے۔ تمام اپوزیشن جماعتوں متحد ہونگی تو اثر بھی ہو گا اور نتیجہ بھی نکلے گا۔ انہوں نے مزید کہا کہ جب سے نوازآئے ہیں ہم ’’گو نواز گو‘‘ پر لگے ہوئے ہیں۔ شریف برادران3بار حکومت میں آئے ہیں۔ عوام کو کیا ملا؟ انہوں نے کہا کہ لوگ جھولیاں اٹھا اٹھا کر شریفوں کے جانے کی دعا مانگ رہے ہیں۔ 2017ء الیکشن کا سال ہے یا نہیں اگلے ماہ پتا چل جائے گا۔

مزید : صفحہ اول