تبادلوں کی دھمکیوں میں نہیں آئینگے ،رفیع اللہ

تبادلوں کی دھمکیوں میں نہیں آئینگے ،رفیع اللہ

ڈیرہ اسماعیل خان(نمائندہ پاکستان )زبردستی نافز کی جانیوالی رضاکارانہ علیحدگی سکیم (VSS)کیخلاف احتجاج پر مجبور نہ کیا جائے،تبادلوں کی دھمکیوں میں نہیں آئینگے،پی ٹی سی ایل منیجمنٹ کو زمینی حقائق کا ادراک ہونا چاہئے کسی صورت فیصلے مسلط نہیں ہونے دینگے،ورکرز کو ہراساں اور تنگ کرنیوالا سلسلہ فی الفور ختم کیا جائے VSSکے مسئلہ پر ورکرز کے حقوق کا ہر صورت تحفظ کرینگے،رفیع اللہ کنڈی ریجنل صدر پی ٹی ای یو (سی بی اے)۔تفصیلات کے مطابق پی ٹی سی ایل مین ایکس چینج میں پاک ٹیلی کام ایمپلائز یونین(سی بی اے) کے زیر اہتمام جلسہ کا اہتمام کیا گیا جس کی صدارت رفیع اللہ کنڈی نے کی جسلہ سے خطاب کرتے ہوئے رفیع اللہ کنڈی و دیگر مقررین نے کہا کہ ورکرز اپنے درمیان اتحاد و اتفاق کا مظاہرہ کریں انہوں نے کہا کی زبردستی نافذ کی جانیوالی VSS کو یکسر مسترد کرتے ہیں اور ملک بھر میں ہونیوالے تبادلوں کو فی الفور منسوخ کیا جائے اور ملازمین کو دیئے جانیوالے وارننگ لیٹر کو فوری طور پر واپس لیا جائے انہوں نے مزید کہا کہ اس غیر پیشہ وارانہ عمل کو فوری طور پر روکا جائے اور ملازمین کو پریشان کرنے کا سلسلہ بند کیا جائے ان کی عزت نفس کو مجروح نہ کیا جائے،انہوں نے اس موقع پر پی ٹی سی ایل کے ورکرز کو یقین دلایا کہ آپ اکیلے نہیں بلکہ ہم آپ کے شانہ بشانہ ہیں اور ورکرزکے حقوق کا ہر صورت تحفظ کیا جائیگا۔انہوں نے کہا کہ پی ٹی سی ایل ایک منافع بخش ادارہ ہے تو VSS کی کیا ضرورت پڑی ہے،اس موقع پر انتظامیہ کو ملازمین کے پے سکیل اور ترقیوں کے مسئلے پر ان کے تحفظات دور کیئے جاتے ناکہ وی ایس ایس کو مسلط کیا جاتا۔ پی ٹی سی ایل کو منافع بخش ادارہ بنانے میں ورکرز کا بنیادی کردار ہے انہوں نے ورکرز کے پیغام کو آگے بڑھاتے ہوئے انتظامیہ کومشورہ دیا کہ بس اب بہت ہوگیا خدارا اپنی ترقی اور بونس کیلئے غریب ملازمین کی آہ نہ لیں کسی کا رزق زبردستی چیھننے کے عمل کی آخرت میں بازپرس ہوگی اور ورکرز کو یقین دلایا کہ ان کے حقوق پر پی ٹی ای یو(سی بی اے) کے پلیٹ فارم پر ہر ممکن دفاع کیا جائیگا اس موقع پر چیئرمین ہدایت اللہ کھوکھر ، جنرل سیکرٹری حاجی اشفاق، سعادت حسین،حسنین،شکیل احمد،اکرام اللہ،سمیع اللہ خان و دیگر مقررین نے ورکرز کے حقوق کے حوالے سے خطابات کیئے اور ورکروں کو اپنے درمیان اتفاق و اتحاد کا مشورہ دیا۔

مزید : پشاورصفحہ آخر