ٹریفک حادثات میں متاثرہ افراد کا عالمی دن، ریلیوں، سیمینارز کا انعقاد

ٹریفک حادثات میں متاثرہ افراد کا عالمی دن، ریلیوں، سیمینارز کا انعقاد

  



ملتان ‘ خانیوال ‘ میاں چنوں ‘ وہاڑی ‘ لیہ ( کرائم رپورٹر ‘ نمائندگان ) ریسکیو 1122 کی جانب سے ٹریفک حادثات میں زخمی اور جاں بحق ہو جانیوالے افراد کا عالمی دن منایا گیا ۔ اس حوالے سے مختلف شہروں میں واقع ادارے کے دفاتر میں سیمینارز ‘ ریلیوں کا انعقاد کیا گیا۔ سڑک پر حفاظت کے حوالے سے شہروں میں شعور اجاگر کرنے کی مہم چلائی گئی اور پمفلٹ تقسیم کیے گئے ۔ مقررین نے اپنے اپنے خطبات میں ٹریفک قوانین پر عمل کی اہمیت اجاگر کی ۔ (بقیہ نمبر18صفحہ12پر )

ملتان سے کرائم رپورٹر کے مطابق زخمیوں کے عالمی دن کے موقع پرریسکیو1122‘سٹی ٹریفک پولیس ریسکیو اسٹیشن چوک کمہارانولہ مدنی چوک تک روڈسیفٹی آگاہی ریلی اورسیمینارکا انعقاد کیا۔ریلی میں ریسکیورز‘ٹریفک وارڈنز کے نوجوان‘سوشل سوسائٹی سکول اورکالج کے طلبانے شرکت۔شرکاء نے بینرز‘چارٹ اٹھارکھے تھے جن پر روڈ سیفٹی سے متعلق نعرے لکھے ہوئے تھے۔ریلی کی قیادت ڈسٹرکٹ ایمرجنسی آفیسر1122ڈاکٹرکلیم اﷲ اورسٹی ٹریفک پولیس نے بھی شرکت کی۔آج کے دن کے حوالے سے یہ کہ ہم اپنے ان پیاروں کو یادکریں جوحادثات کا شکارہوئے اورہم سے بچھڑگئے۔ماضی سے سبق سیکھیں اورٹریفک سیفٹی رولزپرعمل پیراہوں۔موٹرسائیکل چلاتے ہوئے ہیلمٹ ضروراستعمال کریں ۔ہیلمٹ سرکی چوٹ سے محفوظ رکھتاہے۔ گاڑی چلاتے وقت سیفٹی ہیلمٹ کی عادت بنائیں اورٹریفک اشاروں پرعمل پیراہوکراپنی اوردوسروں کی زندگیوں کومحفوظ بنائیں۔محفوظ معاشرے کا قیام ہرذمہ دار شہری کا فرض ہے۔ ریلی ریسکیو اسٹیشن چوک کمہارانوالہ سے شروع ہوئی جوکہ مدنی چوک پر اختتام پذیرہوئی۔سیمینارکاباقاعدہ آغاز تلاوت قرآن پاک سے ہوا ۔ سٹیج سیکرٹری کے فرائض ایمرجنسی آفیسر انجینئر احمد کمال نے انجام دیے دیگر شرکاء میں ایمرجنسی آفیسرڈاکٹرخالد محمود‘ ریسکیواینڈ سیفٹی آفیسرمحمد امتیاز‘کنٹرول روم انچارج محمد مدثر ضیاء تمام اسٹیشن انچارجز‘ٹرانسپورٹ انچارج چوہدری غنیمت علی اور اکاؤٹینٹ نذیر احمد بھی شریک تھے ۔ڈسٹرکٹ ایمرجنسی آفیسر1122ڈاکٹرکلیم اﷲ نے ریسکیو1122کی کارکردگی رپورٹ اورپیش آنے والے حادثات کے اعدادوشماربتائے۔ خانیوال ‘ میاں چنوں سے بیورو نیوز ‘ نمائندہ پاکستان کے مطابق ریسکیو 1122کی جانب سے ٹریفک حادثات میں متاثرہ افراد کا عالمی دن منایا گیا۔ڈسٹرکٹ ایمرجنسی آفیسر ریسکیو 1122ڈاکٹراعجاز انجم کی صدارت میں ریلی بھی نکالی گئی جس میں ایمرجنسی آفیسر ندیم اقبال خٹک، سیفٹی آفیسر کنور فہیم ،میڈیاکوآرڈینیٹرراشدچوہدری کے علاوہ بڑی تعداد میں ریسکیور اور شہریوں نے حصہ لیا۔ریسکیو سیفٹی آفیسر کنور فہیم کی جانب سے شرکاء میں ٹریفک سیفٹی کے متعلق پمفلٹ تقسیم کیے گئے اور آگاہی دی گئی۔ڈاکٹر اعجاز انجم کا کہنا تھا کہ ٹریفک حادثات کی بڑی وجہ ٹریفک قوانین کی پاسداری نہ کرنا ہے۔ وہاڑی سے بیورو رپورٹ ‘ نمائندہ خصوصی کے مطابق ڈائریکٹر جنرل ڈاکٹر رضوان نصیر کی ہدایت پر ریسکیو 1122وہاڑی کے زیر اہتمام ریسکیو اسٹیشن پر ٹریفک حادثات سے متاثرہ افراد کا عالمی دن منایا گیا جس کا بنیادی مقصدٹریفک حادثات کا شکار ہو کر لقمہ اجل بننے والے اور معذورہونے والے لوگوں کی یاد تازہ کرنااور اس کے ساتھ ساتھ ہر قسم کے حالات میں بدترین حادثات کا شکار لوگوں کی بروقت عملی مدد میں مصروف ایمرجنسی سروسز، پولیس اورمیڈیکل پروفیشنلز کو خراج تحسین پیش کرنا تھا تقریب کے مہمان خصوصی ڈسٹرکٹ کو آرڈینیشن آفیسر علی اکبر بھٹی تھے ڈسٹرکٹ ایمرجنسی آفیسر ریسکیو 1122ڈاکٹر عابد حسین بھٹی، ڈی ایس پی ٹریفک چوہدری محمد ریاض گجر، اے ایس آئی پنجاب ہائی وی پیٹرولنگ پولیس عابدحسین، ریسکیو سیفٹی آفیسر عبدالجبار، کنٹرول روم انچارج محمد عمران ،عطا الرحمان (TMI) ،میڈیا فوکل پرسن ریسکیو 1122 محمد طارق رشید ، ریسکیورز اورحادثات سے متاثرہ لوگ اس موقع پر موجود تھے ڈسٹرکٹ کوارڈینیشن آفیسر علی اکبر بھٹی نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ریسکیو سروس کی بدولت حادثات میں انسانی جانوں کے نقصان کی شرح میں نمایاں کمی آئی ہے۔انچارج ڈسٹرکٹ ایمرجنسی ڈاکٹر عابد حسین بھٹی نے کہا کہ دنیا بھر میں 91فیصد اموات ٹریفک حادثات کی وجہ سے ہوتی ہیں اور اس کا زیادہ تر شکار نوجوان اور کم عمر افراد کے ساتھ ساتھ وہ لوگ بنتے ہیں ۔ کنٹرول روم انچارج محمد عمران نے ریسکیو 1122کی جائزہ رپورٹ پیش کی ۔ لیہ سے نمائندہ پاکستان کے مطابق حادثات کے متاثرین کے عالمی دن کے سلسلہ میں ریسکیو 1122لیہ میں ایک سیمینار منعقد کیا گیا۔جس میں ریسکیورز ،، ٹریفک اہلکار اور ریسکیو رضاکاران نے شرکت کی ۔ سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے ڈسٹر کٹ ایمرجنسی آفیسر ڈاکٹر محمد تسلیم نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ دوران ڈرائیونگ غفلت ، لاپرواہی اور تیز رفتاری حادثات کا سبب بنتی ہے اور 90فیصد حادثات رونما ہوتے ہیں ، کم عمر افرادجن کے پاس ڈرائیونگ لائسنس نہیں ہوتا اور ٹریفک کے اصولوں سے نا واقفیت بھی حادثات کا سبب بنتی ہے ۔ ٹریفک انسپکٹر رسول بخش ، سلیم دانش ، عمران شاہ اور عرفان شاہ نے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ دوران ڈرایؤنگ موبائل کا استعمال ، کھانے پینے ، میوزک پلیر سے کھیلنے اور روڈ پر توجہ نہ رکھنے سے حادثات میں دن بدن اضافہ ہو رہا ہے ، انہوں نے کہا کہ ڈرائیور سیٹ کے ساتھ خالی بوتلیں نہ رکھیں خالی بوتل بریک کے درمیان پھنس کر حادثے کا باعث بن سکتی ہے ، سلیپر کی جگہ سینڈل یا سخت جوتی استعمال کریں تاکہ پاؤ ں سلپ نہ ہو۔

مزید : ملتان صفحہ آخر