جسمانی تشددسے متعلق بل پر سینیٹ میں سرد مہری یا غفلت نہیں برتی گئی:رضا ربانی

جسمانی تشددسے متعلق بل پر سینیٹ میں سرد مہری یا غفلت نہیں برتی گئی:رضا ربانی
جسمانی تشددسے متعلق بل پر سینیٹ میں سرد مہری یا غفلت نہیں برتی گئی:رضا ربانی

  


اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) چیئر مین سینیٹرضا ربانی نے کہا ہے کہ سینیٹ میں جسمانی تشددسے متعلق بل پر سرد مہری یا کوئی غفلت نہیں برتی گئی ,سی سی آئی نے فوج تعیناتی کا کہا تھا تو دوبارہ اجلاس بلا ئیں.

سابق صدرآصف زرداری کے واپسی کا فیصلہ ہوگیا بہت جلد وہ آپ کے درمیان ہونگے: بلاول بھٹو

تفصیلات کے مطابق میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ سینیٹ میں جب بل آیا تو2 دن بعد قومی اسمبلی تحلیل ہو گئی تھی۔قومی اسمبلی سے منظورشدہ یہ بل سینیٹ میں 14مارچ 2013 کو آیا جبکہ معلومات تک رسائی کا بل قومی اسمبلی میں 12 مارچ 2013 کو منظور ہواتھا۔میڈیا پر بل کے حوالے سے یہ کہا گیا ہے کہ جسمانی تشدد کا بل قومی اسمبلی نے پاس کیا،یہ بھی کہا گیا کہ بل سینیٹ کی سرد مہری پر متروک ہو گیا ہے۔سی سی آئی نے فوج تعیناتی کا کہا تھا تو دوبارہ اجلاس بلا ئیں،اس وقت فوج کی اپنی مصروفیات ہیں،فوج اندرونی دہشتگردی اور اب ایل او سی پر بھارت کے ساتھ مصروف ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ مشترکہ مفادات کونسل مردم شماری کیلیے فوج کے متبادل پر غور کرے،نوے دن سے اوپر ہو چکے مشترکہ مفادات کونسل کا اجلاس بھی نہیں ہوا۔ جب تک مردم شماری نہیں ہو گی باتیں ہوتی رہیں گی،مردم شماری انتہائی ضروری ہے۔ نادراکاڈیٹا بیس استعمال کیاگیا تو کوئی قبول نہیں کرے گا ۔

مزید : اسلام آباد


loading...