حجرہ شاہ مقیم میں دیور سمیت 6 درندوں کی 3 سال تک خاتون سے زیادتی کا انکشاف، مقدمہ درج

حجرہ شاہ مقیم میں دیور سمیت 6 درندوں کی 3 سال تک خاتون سے زیادتی کا انکشاف، ...
حجرہ شاہ مقیم میں دیور سمیت 6 درندوں کی 3 سال تک خاتون سے زیادتی کا انکشاف، مقدمہ درج

  

اوکاڑہ (ویب ڈیسک) دیور سمیت چھ ملزمان شادی شدہ خاتون سے تین سال تک جنسی بدفعلی کرتے رہے لیکن تین بچیوں کے مستقبل اور جان کے خوف سے برداشت کرتی رہی،لیکن بالآخر صبر جواب دے گیا اور  پھٹ پڑی، پولیس نے مقدمہ درج کرلیا جبکہ  میڈیکل رپورٹ نے انسانیت زیادتی کی تصدیق کردی لیکن آخری اطلاع تک کوئی ملزم گرفتار نہیں ہوسکا۔ 

روزنامہ خبریں کے مطابق حجرہ شاہ مقیم کے نواحی گاﺅں 2D کی خاتون کوثر بی بی کی مدعیت میں درج ہونے والے مقدمہ میں دل دہلادینے والے انکشافات سامنے آئے ہیں جس میں خاتون نے کہا ہے کہ اس کی شادی پانچ چھ سال قبل مقامی شخص لیاقت علی کے ساتھ ہوئی جس میں اس کی تین بیٹیاں پیدا ہوئیں، رخصتی کے بعد جب اس کی والدہ فوت ہوگئی تو اس کے درندہ صفت سسرالیوں نے نڈر ہوکر اس کے ساتھ گزشتہ تین سالوں سے جنسی تشدد شروع کردیا، اس کے دیور سمیت چھ افراد جن میں تین حقیقی بھائی شوکت علی، اشفاق عرف جج، عبدالرزاق پسران اشرف، اشرف ولد موسیٰ، ساجد ولد سلیم، سرور ولد صدیق شامل ہیں ، گزشتہ تین سال سے مسلسل اجتماعی زیادتی کا نشانہ بناتے رہے ہیں جس دوران اس کا خاوند مجبوری کی حالت میں تمام تر بے غیرتی اور رسوائی برداشت کرتا رہا جبکہ وہ اپنےو الدین، تین معصوم بیٹیوں کے مستقبل اور جان کے خوف سے خاموش رہی اور طویل زیادتی کا مسلسل نشانہ بنتی رہی۔

خاتون نے بیان کیا کہ پانچ روز قبل بھی ملزم ساجد نے دن دیہاڑے اس کے ساتھ طویل دورانیہ کا جنسی تشدد زناءحرام کاری اور اسی رات قریب نوبجے ملزم شوکت نے جان سے مار دینے کی دھمکی دے کر اس کے ساتھ پھر زناءبالجبر کیا اور رات بھر جنسی تشدد کا نشانہ بناتا رہا ۔ اس سنگین واقعہ بارے جب خاتون نے حجرہ شاہ مقیم پولیس کو رپورٹ کیا تو پولیس نے مقدمہ درج کرکے ملزمان کی تلاش شروع کردی ہے تاحال کوئی ملزم گرفتار نہیں ہوسکا۔ اس سلسلے میں ایس ایچ او حجرہ شاہ مقیم نے صحافیوں کو بتایا کہ ملزمان قانون کی گرفت سے بچ نہیں پائیں گے، جلد گرفتار کرکے کیفر کردار تک پہنچایا جائے گا۔

مزید : اوکاڑہ