اینٹی کرپشن ، 14ماہ میں 13ہزار سے زائد درخواستوں پر فیصلے

اینٹی کرپشن ، 14ماہ میں 13ہزار سے زائد درخواستوں پر فیصلے
 اینٹی کرپشن ، 14ماہ میں 13ہزار سے زائد درخواستوں پر فیصلے

  

لاہور (عامر بٹ سے)محکمہ اینٹی کرپشن لاہور ریجن نے 16جولائی 2016سے ستمبر 2017تک کی کارکردگی رپورٹ جاری کر دی،محکمہ اینٹی کرپشن کی تاریخ میں پہلی باروصول شدہ درخواستوں کے مقابلے میں فیصلہ شدہ درخواستوں کی تعداد زیادہ، ڈی ڈی آئی قصور عمر مقبول،ڈی ایس پی شیخوپورہ سید عباس شاہ،انسپکٹر ہیڈ کوارٹر سید زبیر اخلاق،انسپکٹر ہیڈ کوارٹر میڈیم نازیہ سندھو ، ڈی ایس اپی اینٹی کرپشن لاہور ریجن رئیس احمد خان ، اسسٹنٹ ڈائریکٹر انویسٹی گیشن لاہور ریجن امتیاز محسن ،انسپکٹر ہیڈ کوارٹر لاہور ریجن اعظم منیس اور اسسٹنٹ ڈائریکٹر لاہور ریجن محمد خالد نے دن رات کی بنیاد پر انکوائریوں کی سماعت کرکے اپنی کارکردگی کو ثابت کیا، جولائی 2016سے ستمبر 2017 تک دھوکہ دہی،فراڈ ،سرکاری اراضی پر قبضے ،رشوت وصولی ،کرپشن ،لینڈ مافیا کی معاونت ،سرکاری فنڈز اور سرکاری خزانے کو نقصان پہنچانے،ناجائز اثاثہ جات،سرکاری وسائل کا غلط استعمال ، اختیارات سے تجاوز کرنے جیسے مختلف الزامات میں سینکڑوں سرکاری اور پرائیویٹ افراد کے خلاف مختلف دفعات کے تحت 14ہزار 4 درخواستوں اور انکوائریوں کی سماعت کی گئی ،جس میں سے 13ہزار 6سو 65 انکوائریوں پرفیصلے کرتے ہوئے سائلوں کو انصاف مہیا کیا گیا یا متعلقہ ڈیپارٹمنٹ کو ریفر کر دیا گیا ، ،2188اشتہاریوں اور مقدمات میں مطلوب افراد کو گرفتار کرکے جیل بھیجا گیا ، جبکہ ان ا شتہاریوں اور مختلف مقدمات میں پرائیویٹ اور سرکاری اہلکاروں کی گرفتاری کے لئے محکمہ اینٹی کرپشن لاہور یجن کی جانب سے مقررکردہ ریڈ ٹیم نے 376ریڈ آپریشنز کئے جس میں کامیابی کا تناسب 90فیصد رہا ،اس کے علاوہ مقدمات میں گرفتار ملزمان کے 1471چالان مکمل کرکے ان کو عدالتوں میں جمع کروایا گیا ،سائلین کی جانب سے دائر درخواستوں میں ملزمان سے 111ملین روپے کی ریکوری کرکے حقداران کو دی گئی یا ان کو حکومتی خزانے میں جمع کروایا گیا ، اس کے علاوہ اراضی کی صور ت میں 690ملین روپے کی ریکوری کی گئی جس کی مجموعی تعداد 1141ملین روپے بنتی ہے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1